.

بلوچستان:ایف سی کے تربیتی مرکز پر حملہ ، 4 سکیورٹی اہلکار شہید،4 دہشت گرد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے رقبے کے اعتبار سے سب سے بڑے صوبہ بلوچستان کے ضلع لورالائی میں سکیورٹی فورسز نے دہشت گردوں کے فرنٹیئر کور (ایف سی) کے ایک تربیتی مرکز پر حملے کی کوشش ناکام بنادی ہے اور چار حملہ آور دہشت گردوں کو ہلاک کردیا ہے جبکہ ان کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں چار سکیورٹی اہلکار شہید اور دو زخمی ہوگئے ہیں۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر ) کے مطابق دہشت گردوں نے منگل کے روز لورالائی میں ایف سی کے تربیتی مرکز میں واقع سکیورٹی فورسز کے رہائشی اورانتظامی کمپاؤنڈ پر حملے کی کوشش کی تھی لیکن دہشت گرد وں کو مرکزی گیٹ پر ہی سکیورٹی اہلکاروں نے روک لیا جس کے بعد حملہ آوروں نے اندھا دھند فائرنگ شروع کردی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق اس کے بعد دہشت گرد چیک پوسٹ کے قریبی احاطے میں گھس گئے تو سکیورٹی فورسز نے فوری طور پر اس کا گھیراؤ کر لیا۔ان کی بروقت اور دلیرانہ کارروائی سے دہشت گرد رہائشی علاقے میں داخل ہونے میں کامیاب نہیں ہو سکے۔اس چیک پوسٹ پر دہشت گردوں کی فائرنگ سے چار سکیورٹی اہلکار شہید اور دو زخمی ہوگئے۔

اس کے بعد دہشت گردوں کے خلاف جوابی کارروائی کی گئی اور اس میں ان چاروں دہشت گردوں کو ہلاک کردیا گیا ہے۔ان حملہ آوروں میں ایک خودکش بمبار تھا اور اس نے سکیورٹی فورسز کی حتمی کارروائی کے دوران میں خود کو دھماکے سے اڑا دیا تھا۔شہید ہونے والے سکیورٹی اہلکاروں کے نام صوبیدار میجر منور ، حوالدار اقبال خان ، حوالدار بلال اور سپاہی نقشب بتائے گئے ہیں۔

اس واقعے سے کوئی پندرہ روز قبل بلوچستان کے ضلع کیچ میں ایف سی کے ایک قافلے پر دہشت گردوں کے حملے میں چھے سکیورٹی اہلکار شہید اور چودہ زخمی ہوگئے تھے۔