.

پاک بحریہ کی بحیرہ عرب میں کامیاب امن مشق 2019 کا اختتام

مشق میں دنیا بھر سے 46 ممالک اپنے جدید آلات اور مشینوں کے ہمراہ مندوبین کے ساتھ شریک ہوئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاک بحریہ کی کامیاب ’’امن مشق 2019‘‘ اختتام پذیر ہو گئیں۔ پاکستان نیوی کی چھٹی کثیر الملکی بحری مشق امن 2019 کراچی میں 8 فروری سے 12 فروری تک بحیرہ عرب میں جاری رہی۔ مشق میں دنیا بھر سے 46 ممالک اپنے جدید آلات اور مشینری کے ہمراہ مندوبین کے ساتھ شریک ہوئے۔ پاکستان کی تینوں مسلح افواج ان مشقوں میں شریک ہوئیں۔

امن مشق کو امن کے لیے متحد کے عزم سے منسوب کیا گیا۔ مشق امن 2019 سے متعلق کمانڈر پاکستان فلیٹ وائس ایڈمرل امجد خان نیازی کا کہنا تھا کہ امن مشق کا بنیادی مقصد خطے میں امن واستحکام کے لیے مشترکہ آپریشنز اور جوابی کارروائیوں کی صلاحتیوں کو نکھارنا ہے۔

خیال رہے کہ پاک بحریہ 2007 سے کثیر الملکی امن مشقوں کی میزبانی کر رہی ہے۔ یہ مشق میری ٹائم تعاون اور محفوظ میری ٹائم ماحول کے فروغ کے لیے اہم سمجھی جاتی ہے۔ عالمی بحری افواج امن کے حصول کی غرض سے ایک پلیٹ فارم پر جمع ہوتی ہیں۔ مشقوں کا مقصد بحری خطرات سے نمٹنا اور سمندری راستوں کو جرائم سے پاک بنانا تھا۔ وفود کے سربراہان نے پاک بحریہ کی جانب سے ’’امن مشق 2019 ‘‘ کے انعقاد کو سراہا۔