ملائشیا کے وزیراعظم ڈاکٹر مہاتیرمحمد کی پاکستان کے تین روزہ دورے پر اسلام آباد آمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ملائشیا کے وزیراعظم ڈاکٹر مہاتیر محمد پاکستان کے تین روزہ سرکاری دورے پر جمعرات کی شب اسلام آباد پہنچ گئے ہیں۔ وہ وزیراعظم عمران خان کی دعوت پر یہ دورہ کررہے ہیں اور 23 مارچ کو یومِ پاکستان پریڈ کی تقریبات میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کریں گے۔

ڈاکٹر مہاتیر کے ہمراہ ملائشیا کا اعلیٰ سطح کا ایک وفد بھی پاکستان آیا ہے۔ان میں سرکردہ کاروباری شخصیات شامل ہیں۔نورخان ائیربیس پر وزیر اعظم عمران خان ، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور وزیر برائے منصوبہ بندی اور ترقی خسرو بختیار نے مہمان وزیراعظم اور ان کے وفد کا خیر مقدم کیا ۔اس موقع پر انھیں 21 توپوں کی سلامی دی گئی۔

ریڈیو پاکستان کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق داؤد نے بتایا ہے کہ ملائشیا کے سرمایہ کار جمعہ کو پاکستان میں 80 سے 90 کروڑ ڈالرز کی سرمایہ کاری سے متعلق مفاہمت کی مختلف یادداشتوں پر دست خط کریں گے۔ان سمجھوتوں کے تحت وہ انفارمیشن ٹیکنالوجی ، ٹیلی کام ، بجلی کی پیداوار ، ٹیکسٹائل ، زراعت اور حلال کھانوں کی صنعت میں سرمایہ کاری کریں گے۔

ڈاکٹر مہاتیر محمد اسلام آباد میں اپنے قیام کے دوران میں ہم منصب عمران خان سے ون آن ون ملاقات کے علاوہ صدر عارف علوی سے ملاقات کریں گے ۔وہ دونوں ممالک کے درمیان وفود کی سطح پر بات چیت میں بھی شریک ہوں گے۔

دریں اثناء پاکستان کے دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر محمد فیصل نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ملائشی وزیراعظم کے دورے سے دونوں ملکوں کے درمیان موجودہ دوستانہ تعلقات مزید مضبوط ہوں گے۔ان کے دورے کے موقع پر معیشت ، تجارت ، سرمایہ کاری اور دفاع کے شعبوں میں دوطرفہ تعاون کو فروغ دینے کے لیے بات چیت ہوگی تاکہ اس سے دونوں ملکوں کے عوام کو مزید فائدہ پہنچے۔

ایک ننھا بچّہ ملائشی وزیراعظم  ڈاکٹر مہاتیر محمد کو نورخان ائیربیس آمد پر گُل دستہ پیش کررہا ہے۔
ایک ننھا بچّہ ملائشی وزیراعظم ڈاکٹر مہاتیر محمد کو نورخان ائیربیس آمد پر گُل دستہ پیش کررہا ہے۔
مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں