.

گوادر :ہوٹل میں سکیورٹی فورسز کی کارروائی مکمل ، تینوں دہشت گرد ہلاک ، پانچ افراد شہید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے ساحلی شہر گوادر میں سکیورٹی فورسز نے ایک پنج ستارہ ہوٹل میں گھس آنے والے تینوں دہشت گردوں کو کئی گھنٹے کی کارروائی کے بعد ہلاک کردیا ہے۔دہشت گردوں کے حملے اور ان کے خلاف آپریشن کے دوران میں پاک بحریہ کے ایک سپاہی سمیت پانچ افراد شہید ہوگئے ہیں ۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر)کے ایک بیان کے مطابق گوادر شہر میں واقع ہوٹل پرل کانٹی نیٹل میں دہشت گرد کے خلاف کارروائی کے دوران میں پاک فوج کے دو کپتان ، بحریہ کے دو اہلکار اور ہوٹل کے دو ملازمین زخمی ہوئے ہیں۔

پاک فوج کے ترجمان نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ دہشت گردوں نے ہوٹل میں داخل ہونے کے بعدمہمانوں کو یرغمال بنانے کی کوشش کی تھی لیکن محافظوں کی مزاحمت کے بعد وہ سیڑھیوں کی طرف بھاگ نکلے تھے اور انھوں نے فائر نگ شروع کردی تھی جس سے گارڈ ظہور اور تین ملازمین فرہاد، بلاول اور اویس شہید ہوگئے۔

پاک فوج کے جوان ، پاک بحریہ اور پولیس اہلکار دہشت گردوں کے حملوں کی اطلاع ملتے ہی ہوٹل پہنچ گئے تھے۔انھوں نے ہوٹل میں مقیم مہمانوں اور عملہ کو بہ حفاظت نکال کردہشت گردوں کو چوتھی منزل تک محدود کردیا تھا۔ دہشت گردوں نے سکیورٹی فورسز سے بچنے کے لیے سی سی ٹی وی کیمرے اتار کرچوتھے فلور کے راستوں پر بارودی سرنگیں بچھا دی تھیں ۔

مگر سکیورٹی اہلکاروں نے دہشت گردوں تک پہنچنے کے لیے خصوصی راستے بنالیے اور پھر انھیں ہلاک کردیا ہے۔ سکیورٹی فورسز نے ہوٹل کی راہ داریوں میں دہشت گردوں بچھائی گئی بارودی سرنگیں صاف کر دی ہیں۔دہشت گردوں سے فائرنگ کے تبادلے میں پاک بحریہ کے سپاہی عباس خان شہید ہوئے ہیں۔