’’پاکستان خطےمیں کشیدگی کم کرنے کے لئے مفاہمتی کوششیں جاری رکھے گا’’

ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کی اپنے وفد کے ہمراہ وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

پاکستان اور ایران نے دوطرفہ معاملات پر تعاون بدستور جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔ جمعہ کو ایران کے وزیر خارجہ جواد ظریف وفد کے ہمراہ وزارتِ خارجہ پہنچے۔ وزارتِ خارجہ آمد پر شاہ محمود قریشی نے مہمانوں کا خیر مقدم کیا۔

وزارت خارجہ میں پاکستان اور ایران کے درمیان وفود کی سطح پر مذاکرات کے دوران پاک ایران تعلقات، علاقائی سلامتی سمیت دیگر باہمی دلچسپی کے امور پر بات چیت کی گئی۔ دونوں ممالک کے مابین دوطرفہ تعلقات کو مضبوط بنانے پر بات چیت ہوئی اور دونوں ممالک نے دوطرفہ معاملات پر تعاون بدستور جاری رکھنے پر اتفاق کیا جبکہ امریکا اور ایران کے مابین حالیہ کشیدگی پر بھی غور کیا گیا۔

دوسری جانب شاہ محمود قریشی نے کہا کہ خطے میں کشیدگی کسی کے مفاد میں نہیں، تمام اسٹیک ہولڈرز کو تحمل اور بردباری کا مظاہرہ کرنے کی ضرورت ہے۔ واضح رہے کہ ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کا منصب سنبھالنے کے بعد پاکستان کا یہ تیسرا دورہ ہے۔

ایران کے وزیرخارجہ جواد ظریف نے آج اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان سے بھی ملاقات کی جس میں پاکستان اورایران کے دوطرفہ تعلقات پرتبادلہ خیال کیاگیا ۔وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی بھی اس موقع پر موجود تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں