.

چین کی مدد سے مسئلہ کشمیر سلامتی کونسل میں اٹھائیں گے: پاکستان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان نے کہاہے کہ وہ مقبوضہ جموں وکشمیر کی خصوصی حیثیت کو ختم کرنے کا بھارتی فیصلہ چین کی مدد سے سلامتی کونسل میں اٹھائیں گے۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کراچی میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں کہا کہ بھارت کے پاس کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کا کوئی جواز نہیں۔ بھارتی حکومت کے اس غیرقانونی اقدام کی مذمت کے لیے معاملہ سلامتی کونسل میں پیش کیا جائے گا۔

ایک سوال کے جواب میں شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ چین کو بتا دیا ہے کہ پاکستانی حکومت کشمیر کے خصوصی اسٹیٹس کو ختم کرنے کا بھارتی اعلان سلامتی کونسل میں اٹھائے گی۔ اس حوالے سے ہمیں سلامتی کونسل میں چین کی معاونت کی ضرورت ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ بیجنگ بے اسلام آباد کو یقین دلایا ہے کہ وہ مسئلہ کشمیر کے حوالے سے عالمی سطح پرپاکستان کی تمام مساعی کی معاونت کرے گا۔ چین نے کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کا بھارتی فیصلہ مسترد کرکے پہلے ہی پاکستان کے موقف کی تائید کی ہے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ وہ سلامتی کونسل کے 15 مستقل ارکان میں دو غیر مستقل ارکان انڈونیشیا اور پولینڈ کے ساتھ بھی رابطے میں بھارت کے خلاف قرارداد میں ان دونوں ملکوں کی معاونت بھی حاصل کی جائے گی۔