.

لاہور میں الیکٹرانکس کی ورکشاپ میں دھماکا، ایک شخص جاں بحق ، 6 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے دوسرے بڑے شہر لاہور میں الیکٹرانکس کی ایک ورکشاپ کے باہر دھماکے کے نتیجے میں ایک شخص جاں بحق اور چھے افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

لاہور پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا ہے کہ بم دھماکا صوبائی دارالحکومت کے علاقے ٹاؤن شپ میں واقع الیکٹرانکس کی ایک دکان میں ہواہے۔ابتدائی تحقیقات کے مطابق اس دکان میں ایک ریفریجریٹر میں گیس بھری جارہی تھی کہ اس دوران اچانک دھماکا ہوگیا۔

صوبہ پنجاب کے محکمہ انسداد دہشت گردی ( سی ٹی ڈی) کے ترجمان نے کہا ہے کہ ہفتے کی شب آٹھ بجے کے قریب ٹاؤن شپ میں ریفریجریٹروں کی ایک ورکشاپ کے باہر دھماکا ہوا ہے۔

ترجمان نےابتدائی تحقیقات کے حوالے سے بتایا ہے کہ’’ بظاہر یہ دھماکا کمپریسر کے پھٹنے سے ہوا ہے،اس کے ٹکڑے مل گئے ہیں اور کسی دھماکا خیز مواد کے کوئی شواہد نہیں ملے ہیں۔‘‘

بیان کے مطابق گیس دھماکے میں مرنے والا ایک ٹیکنیشن تھا اور وہ واقعے کے وقت ایک فریج کو ٹھیک کررہا تھا۔اس کی شناخت حافظ محمود کے نام سے کی گئی ہے اور اس کی عمر بائیس سال تھی۔محکمہ اس واقعے کی مزید تفصیل اتوار کو لیبارٹری کی رپورٹ موصول ہونے کے بعد جاری کرے گا۔

دھماکے کی اطلاع ملتے ہی بم ڈسپوزل اسکواڈ اور ریسکیو 1122 کا امدادی عملہ جائے وقوعہ پر پہنچ گیا اور پولیس نے علاقے کا محاصرہ کر لیا۔ زخمیوں کو لاہور کے جناح اسپتال میں ہنگامی طبی امداد کے لیے منتقل کردیا گیا ہے۔