.

کرونا کیسز میں اضافہ: اسلام آباد کے 5 سب سیکٹرز سیل، دفعہ 144 نافذ

شہر میں تجارتی سرگرمیاں اور پارک جمعہ، ہفتہ اور اتوار کو مکمل بند رہیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

وفاقی دارلحکومت کی انتظامیہ نے کرونا کیسز میں اضافے کے باعث اسلام آباد کے 5 سب سیکٹرز سیل کر دیئے اور شہر میں 2 ماہ کیلئے دفعہ 144 نافذ کردی جس کے تحت پانچ یا اس زاید افراد کے ایک ساتھ جمع ہونے پر پابندی ہوتی ہے۔

کرونا ایک بار پھر پنجے گاڑنے لگا ہے اور اسلام آباد میں وباء کے وار میں تیزی آ گئی۔ شہر کے 5 سب سیکٹرز سیل کر دیئے گئے۔ سیل کئے گئے سیکٹرز میں آئی ٹین ٹو، آئی ایٹ فور اور ایف الیون ون شامل ہیں۔ اس کے علاوہ جی سکس ٹو اور جی ٹین فور کو بھی سیل کر دیا گیا۔

ضلع میں دفعہ 144 بھی نافذ کر دی گئی تاہم متاثرہ سیکٹرز کو ناکے لگا کر کنٹرول کیا جارہا ہے۔

اسلام آباد میں عوامی اور دیگر مقامات پر ماسک کا استعمال لازمی قرار دے دیا گیا۔ نوٹیفکیشن کے مطابق عوامی مقامات پر ماسک نہ پہننے والوں کے خلاف قانونی کارروائی ہوگی۔

اس کے علاوہ شہر میں پارکس شام 6 بجے بند ہو جائیں گے۔ سنیما اور مزارات بند رہیں گے جبکہ تجارتی سرگرمیاں اور پارک جمعہ، ہفتہ اور اتوار کو مکمل بند رہیں گے۔

مارکیٹیں شام 6 بجے تک کھلی رہیں گی۔ ہفتہ اور اتوار کو تمام مارکیٹس بند ہوں گی جبکہ کریانہ اسٹورز، میڈیکل اسٹورز، پھل سبزی اور دودھ دہی کی دکانوں کو استثنیٰ ہوگا۔

ریسٹورنٹس پر بیٹھ کر کھانا کھانے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔ پارسل اور ہوم ڈیلیوری کی اجازت ہوگی۔ اسپورٹس اور کلچرل سرگرمیاں بند کر دی گئی ہیں۔ نجی و سرکاری دفاتر میں پچاس فیصد عملے کے ساتھ کام کرنا ہوگا۔ پابندیاں 29 مارچ تک رہیں گی۔