.

موجیں ختم، امتحان کے بغیر کوئی پاس نہیں ہو گا: شفقت محمود

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا ہے کہ کرونا کی وجہ سے تعلیم کا بہت نقصان ہوا ہے -اس بار امتحان ضرور ہوں گے اور بغیر امتحان لیے کسی کو پاس نہیں کیا جائے گاـ 10 جولائی کے بعد سے ملک میں امتحانات کا آغاز ہو گا۔

اس سے قبل آزادکشمیر میں طلبہ کو بغیر امتحان اگلی جماعتوں میں ترقی دینے کا اعلان سامنے آ چکا ہے۔

چاروں صوبوں کے وزرائے تعلیم کا آن لائن اجلاس وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی زیر صدارت منعقد ہوا جس میں کرونا کے پیشِ نظر موجودہ تعلیمی مسائل کا جائزہ لیا گیا اور فیصلوں پر مشاورت کی گئی-

اجلاس کے بعد میڈیا سےگفتگو کرتے ہوئے شفقت محمود کا کہنا تھا کہ طلباء کی شکایت درست ہے کہ کورس مکمل نہیں ہو سکا ہے لہذا نویں اور دسویں کے میں صرف چار مضامین کے امتحان لیے جائیں گے-اختیاری مضامین کے علاوہ ریاضی کا امتحان دینا لازمی ہوگا-

انہوں نے مزید کہا کہ گیارہویں اور بارہویں جماعتوں میں صرف اختیاری مضامین کے امتحان لیے جائیں گے ہماری کوشش ہو گی کہ ستمبر کے دوسرے ہفتے تک تمام نتائج کا اعلان کردیا جائے-

ملک میں او لیول کے امتحانات کا آغاز 26 جولائی سے ہو گا-کرونا کی وجہ سے حکومت نے سخت فیصلے کیے ہیں -اساتذہ اور عملے کو ویکسین لگائی جائے گی اور صرف ویکسین لگنے والے عملے کو ہی امتحان گاہ میں جانے کی اجازت ہو گی-

وزیر تعلیم نے کہا امتحان لینے کا فیصلہ اٹل ہے جسے تبدیل نہیں کیا جائے گا یہ تمام تر فیصلے صوبوں کی مشاورت سے کیے ہیں-