کانگو یو این امن مشن میں شامل ہیلی کاپٹر گر کر تباہ، 06 پاکستانی فوجی شہید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

افریقی ملک کانگو میں اقوام متحدہ کی امن فوج کے نگرانی مشن کے دوران ایک پوما ہیلی کاپٹر گر کر تباہ ہو گیا۔

پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) آر کے مطابق حادثے میں چھ پاکستانی افسران اور سپاہی اقوام متحدہ کے ان آٹھ امن فوجیوں میں شامل تھے جو کانگو میں ایک مشن کے دوران ہیلی کاپٹر تباہ ہونے کے دوران اپنی جانیں گنوا بیٹھے۔

آئی ایس پی آر نے اپنے ایک بیان میں بتایا کہ شہید ہونے والے 6 پاکستانی افسران اور جوانوں کی شناخت لیفٹیننٹ کرنل آصف علی اعوان، پائلٹ میجر سعد نعمانی، کو پائلٹ میجر فیضان علی، فلائٹ انجینئر نائب صوبیدار سمیع الحق خان، کریو چیف حوالدار محمد اسماعیل اور گنر لانس حوالدار محمد جمیل کے ناموں سے ہوئی۔

پاک فوج کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ پاکستان کا ایک ایوی ایشن مشن اقوام متحدہ کے مشن کانگو میں 2011 سے امن مشن کے فرائض پر تعینات ہے۔

آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ پاکستان نے ہمیشہ بین الاقوامی برادری کے ایک ذمہ دار رکن کے طور پر ایک اہم کردار ادا کیا ہے تاکہ اقوام متحدہ کے مختلف امن مشنز میں فعال تعاون کے ذریعے عالمی امن اور سلامتی کے نظریات کو حاصل کرنے میں مدد کی جا سکے۔

پاک فوج کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ہمارے امن دستوں نے ہمیشہ اپنے آپ کو تنازعات کے شکار علاقوں میں امن کی حفاظت کے چیلنجنگ کاموں کو لگن کے ذریعے انجام دینے میں اعلیٰ ترین قربانیاں دے کر اپنے آپ کو ممتاز کیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے فوجی افسران اور جوانوں کی ہیلی کاپٹر حادثے میں شہادت پر افسوس اظہار کا اظہار کرتے ہوئے افواج پاکستان کی عالمی امن کیلئے خدمات پر خراج تحسین پیش کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں