.

امریکی وزیر خارجہ کا بلاول بھٹو کو فون، ’پاکستان سے تعلقات کی مضبوطی کے لیے پر عزم ہی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیرخارجہ انٹونی بلنکن کا کہنا ہے کہ پاکستان سے انسداد دہشت گردی سمیت دیگر شعبوں میں تعاون کو مزید فروغ دیں گے۔

امریکی وزیرخارجہ ٹونی بلنکن نے ٹوئٹر پر پیغام میں کہا کہ وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری سے بات ہوئی۔ رواں برس پاک امریکا تعلقات کے 75 برس مکمل ہو رہے ہیں۔

سیکرٹری خارجہ کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان سے باہمی تعلقات کومزید مضبوط کرنے کے لئے پرعزم ہیں۔ انسداد دہشت گردی، افغانستان میں استحکام اور تجارت سمیت دیگر امور پر دونوں ممالک کے تعاون کو مزید فروغ دیں گے۔

علاوہ ازیں جمعے کو پاکستان کے دفتر خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا تھا کہ امریکی وزیر خارجہ نے بلاول بھٹو کو رواں ماہ کے آخر میں کورونا پر ہونے والے ورچوئل اجلاس میں شرکت کی دعوت دی ہے۔ اس کے علاوہ 18 مئی کو نیویارک میں گلوبل فوڈ سکیورٹی کے موضوع پر ہونے والے اجلاس میں بھی شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ جمعرات کو واشنگٹن میں پریس بریفنگ کے دوران محکمہ خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے کہا تھا کہ امریکہ پاکستان کے ساتھ بارڈر سکیورٹی اور انسداد دہشت گردی سمیت ’باہمی مفادات‘ کے امور پر کام جاری رکھنا چاہتا ہے۔


’ہم دو طرفہ تعلقات کی قدر کرتے ہیں۔ ہم اپنے پاکستانی شراکت داروں کے ساتھ ان معاملات پر کام جاری رکھنا چاہتے ہیں جہاں ہمارے باہمی مفادات ہیں۔ ان میں انسداد دہشت گردی شامل ہے۔ ان میں بارڈر سکیورٹی بھی شامل ہیں۔‘

نیڈ پرائس نے گذشتہ ماہ کراچی یونیورسٹی میں ہونے والے خودکش دھماکے کی بھی ’شدید مذمت‘ کرتے ہوئے کہا تھا کہ کسی بھی جگہ دہشت گرد حملہ انسانیت کی توہین ہے، لیکن ایک یونیورسٹی یا عبادت گاہ یا ایسے ہی کسی مقام کو نشانہ بنانا صحیح معنوں میں انسانیت کی توہین ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں