حج وعمرہ

پاکستان سے براہِ راست مدینہ پہنچنے والے عازمینِ حج کی مکہ مکرمہ روانگی

مدینہ منورہ میں آٹھ روزہ قیام اور روضہ رسولﷺ اور مسجد نبوی کی زیارت کے بعد 3267 عازمین مکہ مکرمہ روانہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

پاکستان سے سرکاری حج سکیم کے تحت براہِ راست مدینہ منورہ پہنچنے والے عازمین کی مکہ مکرمہ روانگی جاری ہے۔

ان عازمین نے مدینہ منورہ میں روضۂ رسولﷺ کی زیارت کا شرف حاصل کیا ہے اور آٹھ روزہ قیام کے دوران میں مسجدِ نبوی ﷺ میں چالیس فرض نمازیں ادا کی ہیں۔اس کے علاوہ مقدس مسجد کے سائے تلے نوافل ادا کیے،قرآن مجید کی تلاوت اور ذکرواذکار سے روحانی بالیدگی حاصل کی ہے۔

انھوں نے شہرنبی ﷺ میں قیام کے دوران میں نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم سے نسبت رکھنے والی تاریخی مساجد اور مقامات کی بھی زیارت کی،بالخصوص ہجرت کے وقت نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم اور ان کے ساتھیوں کے پہلے پڑاؤ کی یادگار مسجد قبا میں نوافل ادا کیے ہیں جہاں دو رکعت نفل کی ادائی کا ثواب ایک عمرے کے برابر ہے۔

پاکستان ہاؤس مدینہ منورہ میں قائم میڈیا سیل کے مطابق مدینہ منورہ سے مجموعی طورپر3267 عازمین خصوصی بسوں کے ذریعے مکہ مکرمہ روانہ کردیے گئے ہیں۔ان میں 1300 عازمین کو منگل کو اور 1967 عازمین کو بدھ کو مکہ مکرمہ روانہ کیا گیا ہے۔

مشن نے بتایا کہ پاکستان سے براہِ راست مدینہ منورہ پہنچنے والے عازمین کی فریضۂ حج کی ادائی کے بعد وطن واپسی جدہ سے ہوگی اور حج ادا کرنے کے بعد مکہ سے مدینہ پہنچنے والے عازمین مدینہ منورہ ہی سے وطن واپس روانہ ہوں گے ۔

واضح رہے کہ سعودی حکومت کے ’’طریق مکہ ‘‘ (شاہراہِ مکہ) اقدام کے تحت پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد سے بین الاقوامی ہوائی اڈے ہی پرعازمینِ حج کی سفری دستاویزات مکمل کی جارہی ہیں اور مدینہ منورہ میں انھیں اور ان کے سامان کو ہوائی اڈے سے براہ راست بسوں اور خصوصی گاڑیوں کے ذریعے ان کے جائے قیام ہوٹلوں میں پہنچایا جارہا ہے۔

پاکستان سے مدینہ منورہ کے لیے جاری حج پروازوں کا عمل بدھ اورجمعرات کی درمیانی شب تک مکمل ہوجائے گا۔ 16 جون جمعرات سے حج پروازیں پاکستان سے براہ راست جدہ کے لیے روانہ ہوں گی اور وہاں سے عازمین کو مکہ مکرمہ لے جایا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں