سیلاب زدگان کے لیے امداد لے کر دوسرا سعودی طیارہ کراچی پہنچ گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستان میں سیلاب زدگان کی امدادی مہم کے تحت سعودی عرب کی طرف سے دوسرا امدادی طیارہ کراچی پہنچ گیا ہے۔

العربیہ نیوز چینل کے نامہ نگار کے مطابق طیارے میں 90 ٹن کا امدادی سامان ہے جس میں غذائی اشیا کے علاوہ صحت سے متعلق اشیا اور خیمے موجود ہیں۔

کنگ سلمان سینٹر برائے انسانی امداد کے تحت پہنچنے والا یہ سامان 9500 متاثرین کے لیے کافی ہو گا۔

خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز کی ہدایت پر پاکستانی سیلاب زدگان کی مدد کے لیے فضائی پل قائم ہو چکا ہے جس کے تحت متاثرین کے لیے مختلف قسم کے امداد سامان کی فراہمی کی جارہی ہے۔

دوسری طرف اسلام آباد میں متعین سفیر نواف المالکی نے کہا ہے کہ ’پاکستان کو امدادی سامان پہنچانے والا اولین ملک سعودی عرب ہے‘۔
’امدادی سامان سے بھرا ہوا پہلا طیارہ کراچی پہنچ چکا ہے جس میں 15 ہزار سے افراد کے لیے غذائی پیکٹ تقسیم کر دیا گیا ہے‘۔

انہوں نے کہا ہے کہ ’ہم چار مختلف قسم کے پلان پر کام کر رہے ہیں جس میں سب سے پہلا غذا اور رہائش کی فراہمی ہے۔ دوسرا پلان امدادی سامان کا فضائی پل ہے جس میں متاثرین کی ضرورتیں پوری کی جائیں گی۔‘

اس سلسلے میں آج کراچی ایئر پورٹ پر دوسرا طیارہ پہنچ چکا ہے جس میں مختلف قسم کا امداد سامان موجود تھا۔

’تیسرا پلان یہ ہے کہ ہم سعودی عوام سے عطیات مہم جمع کر رہے ہیں جو ملک بھر میں شروع ہو چکی ہے‘۔

نواف المالکی نے کہا ہے کہ ’ہمارا چوتھا پلان یہ ہے کہ آئندہ ہفتوں میں ہم نقصان کا تخمینہ لگائیں گے۔ سیلاب کے باعث کتنے مکانات گر گئے ہیں اور بنیادی ڈھانچے کو کتنا نقصان ہوا ہے‘۔

ادھر سرکاری خبر رساں ایجنسی ’’اے پی پی‘‘ نے دفتر خارجہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ سیلاب زدگان کے لئے اب تک متحدہ عرب امارات سے 39، ترکیہ سے 13، چین سے 4، ازبکستان سے ایک، قطر سے چار، فرانس سے ایک، یونیسیف کی دو، اقوام متحدہ کے پناہ گزینوں کے ادارہ ( یو این ایچ سی آر) کی 8 ، ترکمانستان سے ایک، اردن کی ایک اور عالمی ادارہ خوراک کی 3 اور امریکہ سے 11 پروازیں، نیپال سے ایک اور سعودی عرب سے دو پروازیں امدادی سامان لیکر پاکستان پہنچی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں