بھارتی فوج کا کشمیر پر بیان نامعقول ہے: آئی ایس پی آر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

پاکستانی افواج کے شعبہ تعلقات عامہ انٹر سروسز پبلک ریلیشنز [آئی ایس پی آر] نے بھارتی فوج کے اعلیٰ افسر کی جانب سے پاکستان کے زیر انتظام کشمیر پر بیان کو نامعقول قرار دیا ۔

آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل لفٹیننٹ جنرل بابر افتخار نے صحافیوں سے گفتگو کے دوران کہا کہ یہ بیان بھارتی مسلح افواج کی فریب زدہ ذہنیت کا مظہر ہے، لانچ پیڈز اور دہشت گردوں کی موجودگی کے الزامات من گھڑت اور بے بنیاد ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ یہ الزامات بھارتی فوج کے مقبوضہ وادی میں طاقت کے جابرانہ استعمال سے توجہ ہٹانےکی کوشش ہے، یہ اندرونی سیاست کی بھارتی افواج پر چھاپ کا نتیجہ ہے، بھارتی فوجی افسر کے دعوے اور غیر حقیقی عزائم توہین آمیز ہیں۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ پاک فوج علاقائی امن و استحکام کی حامی ہے، اس کی امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائے، ہم اپنی سر زمین کے خلاف کسی بھی مہم جوئی یا جارحیت کو ناکام بنانے کے لیے ہر وقت تیار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کا حقِ خود ارادیت بذریعہ بین الاقوامی قانون، اقوامِ متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار دادوں کے تحت ہے، بھارتی فوج غیر ذمے دارانہ بیانات سے گریز کرے۔

پاک فوج کے شعبۂ تعلقاتِ عامہ کے سربراہ کا کہنا ہے کہ بھارتی فوج مقبوضہ کشمیر میں حقِ خود ارادیت کی تحریک کو کچلنے میں مصروف ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ بھارتی فوج اپنے سیاسی آقاؤں کے نظریے کو آگے بڑھانے کے لیے غیر ذمے دارانہ بیان بازی کر رہی ہے۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کا مزید کہنا ہے کہ بھارتی فوج غیر ذمے دارانہ بیان بازی اور وحشیانہ طرزعمل سے ہر ممکن انداز میں گریز کرے۔

مقبول خبریں اہم خبریں