’’فوجی تنصیبات پرحملے کرنے والوں پرآرمی اورآفیشل سیکرٹ ایکٹ کے تحت مقدمات چلیں گے‘‘

کسی بھی صورت میں فوجی تنصیبات پر حملہ آور ہونے والے مجرموں کے خلاف مزید تحمل کا مظاہرہ نہیں کیا جائے گا: کورکمانڈرزکانفرنس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
4 منٹس read

آرمی چیف جنرل عاصم منیر کے زیر صدارت کور کمانڈرز کی خصوصی کانفرنس میں اس عزم کا اظہارکیا گیا ہے کہ فوجی تنصیبات اور نجی املاک کے خلاف گھناؤنے جرائم میں ملوّث تخریب کاروں کے خلاف پاکستان آرمی ایکٹ اور آفیشل سیکرٹ ایکٹ کے تحت مقدمات چلائے جائیں گے اور انھیں انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی طرف سے جاری کردہ بیان کے مطابق جنرل ہیڈ کوارٹرز (جی ایچ کیو) راول پنڈی میں سوموار کو آرمی چیف جنرل عاصم منیر کے زیر صدارت کور کمانڈرز کی خصوصی کانفرنس ہوئی۔

شرکاء نے پاک فوج کے شہداء کو زبردست خراجِ عقیدت پیش کیا جنھوں نے دہشت گردی کی لعنت سے لڑتے ہوئے مادرِ وطن کے دفاع میں اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کیا ہے۔ عسکری قیادت نے مختلف علاقوں میں سکیورٹی فورسز کی انسداد دہشت گردی اور انٹیلی جنس کی بنیاد پر کارروائیوں، خاص طور پر مسلم باغ حملے میں فوجیوں کی طرف سے دیے گئے دلیرانہ جواب کو سراہا گیا۔

کورکمانڈرزکانفرنس کے شرکاء
کورکمانڈرزکانفرنس کے شرکاء

آئی ایس پی آر کے مطابق عسکری قیادت کو موجودہ اندرونی اور بیرونی سلامتی سے متعلق تفصیل سے آگاہ کیا گیا۔ فورم نے گذشتہ چند روز میں امن و امان کی پیدا ہونے والی صورت حال کا جامع جائزہ لیا گیا اور شرکاء کو بتایا گیا کہ شہداء کی تصاویر، یادگاروں کی بے حرمتی، تاریخی عمارتوں کو نذر آتش کرنے اور فوجی تنصیبات کی توڑ پھوڑ، ان کی آتش زدگی کے منصوبے پر عمل درآمد کیا گیا تاکہ ادارے کو بدنام کیا جا سکے اوراسے ایک سخت ردعمل پر اکسایا جا سکے۔

عسکری قیادت نے فوجی تنصیبات اور سرکاری، نجی املاک کے خلاف سیاسی محرک کی بنا پر حملوں اور تشدد کے واقعات کی سخت الفاظ میں مذمت کی۔ کور کمانڈروں نے ان افسوسناک اور ناقابل قبول واقعات پر فوج کی اعلیٰ وادنیٰ قیادت کی طرف سے غم وغصے اور جذبات کا بھی اظہار کیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق اب تک جمع کیے گئے ناقابل تردید شواہد کی بنیاد پر مسلح افواج ان حملوں کے منصوبہ سازوں، اکسانے والوں، ان کی حوصلہ افزائی کرنے والوں اور مجرموں سے بخوبی واقف ہیں اور اس سلسلے میں بگاڑ پیدا کرنے کی کوششیں بالکل بے سود ہیں۔

فورم نے اس عزم کا اظہار کیا کہ فوجی تنصیبات اور نجی املاک کے خلاف ان گھناؤنے جرائم میں ملوّث افراد کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے گا اور ان کے خلاف پاکستان کے متعلقہ قوانین بشمول پاکستان آرمی ایکٹ اور آفیشل سیکرٹ ایکٹ کے تحت مقدمات چلائے جائیں گے۔

فورم نے فیصلہ کیا کہ کسی بھی حالت میں فوجی تنصیبات اور سیٹ اپ پر حملہ کرنے والے مجرموں، دنگافساد پھیلانے اور خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف مزید تحمل کا مظاہرہ نہیں کیا جائے گا۔آئی ایس پی آر کے مطابق عسکری قیادت نے بیرونی طور پر اسپانسراوراندرونی طور پرسہولت کاری سے برپا شدہ پروپیگنڈاجنگ پر بھی تشویش کا اظہار کیا۔اس کا مقصد مسلح افواج اور پاکستان کے عوام کے درمیان، اور مسلح افواج کی صفوں میں دراڑ پیدا کرنا ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ دشمن قوتوں کے مذموم پروپیگنڈے کو پاکستانی عوام کی حمایت سے شکست دی جائے گی جو ہر مشکل میں ہمیشہ مسلح افواج کے ساتھ کھڑے رہے ہیں۔

فورم نے سوشل میڈیا کے قواعدوضوابط کی خلاف ورزی کرنے والوں کو سزادینے کے لیے متعلقہ قوانین پر سختی سے عمل درآمد کی ضرورت پر زور دیا۔فوجی قیادت نے ملک میں جاری سیاسی عدم استحکام کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کے لیے تمام متعلقہ فریقوں کے درمیان قومی اتفاق رائے کی ضرورت پرزوردیا تاکہ قومی اداروں پرعوام کا اعتماد بحال کیا جا سکے،اقتصادی سرگرمیوں کی بحالی اور جمہوری عمل کو تقویت مل سکے۔

فورم نے اس عزم کا اظہارکیا کہ اس ضروری اتفاق رائے تک پہنچنے کے لیے تمام کوششوں کی حمایت کی جائے گی اورپاک فوج پاکستان کے عوام کی مکمل حمایت سے وطن دشمنوں کے تمام مذموم عزائم کو ناکام بنادے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں