فوج کو 10 لاکھ ایکڑ زمین لیز پر دینا خلافِ قانون ہے: لاہور ہائی کورٹ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

لاہور ہائی کورٹ نے پاکستان فوج کو 10 لاکھ ایکڑ زمین لیز پر دینے کے پنجاب حکومت کے عمل کو غیر قانونی قرار دے دیا ہے۔

پنجاب کی نگران حکومت نے دس لاکھ ایکڑ اراضی فوج کو کاپوریٹ فارمنگ کے لیے فراہم کی تھی اور لیز کا یہ عمل سابق وزیر اعلیٰ چوہدری پرویز الہی کے دور حکومت میں شروع ہوا۔

لاہور ہائی کورٹ نے نگران حکومت کے اقدام کو اختیارات سے تجاوز اور غیر قانونی قرار دیتے ہوئے تمام سرکاری زمین پنجاب حکومت کو واپس کرنے کے احکامات جاری کر دیے ہیں۔

عدالت نے بورڈ آف ریوینیو کو ریکارڈ درست کرنے کے احکامات بھی جاری کرتے ہوئے فیصلے پر عملدرآمد کی رپورٹ بھی اگلے 15 دن میں جمع کرانے کی ہدایت کی ہے۔

عدالت نے اپنی کارروائی میں کہا کہ پچھلی حکومت نے لیز کے معاہدے کو اسمبلی میں پیش کرنے کی تجویز دی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں