جون میں بیرونِ ملک مقیم پاکستانیوں کی ترسیلات زر 2.2 بلین ڈالر رہ گئیں: اسٹیٹ بینک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق بیرون ملک مقیم پاکستانی کارکنوں کی ترسیلات زر جون کے مہینے میں کم ہو کر 2.2 بلین ڈالر رہ گئیں جو اسی مہینے میں ایک برس قبل 2.8 بلین ڈالر تھیں۔

مرکزی بینک کے اعداد وشمار سے ظاہر ہوتا ہے کہ مالی سال 2023ء کے دوران بھی ترسیلات زر کم ہو کر 27 بلین ڈالر پر آ گئیں، جو ایک سال قبل 31.3 بلین ڈالر تھیں۔

دریں اثنا، آئی ایم ایف نے جمعہ کو کہا کہ نئے بیل آؤٹ پروگرام کے لیے 12 جولائی کو آئی ایم ایف بورڈ سے منظوری لی جائے گی۔ یہ پروگرام نو ماہ کا ایک عبوری بندوست ہے، جو مالیاتی امداد کے چار سالہ توسیعی پروگرام کی جگہ لے گا۔

اس پروگرام پر دراصل عمران خان کے دورِ حکومت میں 2019ء میں دستخط کیے گئے تھے اور گذشتہ ماہ اس کی میعاد ختم ہو گئی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں