عمران خان کی بہن ڈاکٹر عظمیٰ پر کرپشن کا دوسرا مقدمہ، ساتھی ملزمان گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

محکمۂ اینٹی کرپشن نے چیئرمین پی ٹی آئی اور سابق معزول وزیر اعظم عمران خان کی ہمشیرہ عظمیٰ خان کو 300 کنال اراضی کے لیے جعلسازی کے کیس میں نامزد کرتے ہوئے مقدمہ درج کر لیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق عظمیٰ خان پرالزام ہے کہ انہوں نے 300 کنال کی قیمتی اراضی جعلسازی کے ذریعے اپنے نام منتقل کروائی۔ اینٹی کرپشن فیصل آباد نے عمران خان کی ہمشیرہ سمیت 9 افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا۔

مقدمے کے متن میں الزام عائد کیا گیا ہے کہ عظمیٰ خان نے چک نمبر 7/2 اور چک نمبر 11/2 تھل جنوبی میں جعلسازی اور دھوکہ دہی سے 300 کنال کی زمین اپنے نام کروائی۔ اینٹی کرپشن پولیس نے مقدمے کے ساتھ کارروائی شروع کر دی۔

پولیس نے پٹواری اور نائب تحصیل دار کو گرفتار کر لیا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ مقدمے میں عائد کیے گئے الزامات سنگین ہیں جبکہ مقدمے میں اراضی ریکارڈ سینٹر کا عملہ، پٹواری، تحصیلدار اور نائب تحصیل دار سمیت 9 افراد نامزد ملزمان ہیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل عدالت نے چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کے وزارتِ عظمیٰ دور کے سابق معاونِ خصوصی برائے سمندر پار پاکستانی زلفی بخاری کے وارنٹ گرفتاری جاری کر دیے۔

زلفی بخاری کے وارنٹ گرفتاری 2 روز قبل جوڈیشل مجسٹریٹ محمد شبیر نے جاری کیے۔ حکام کا کہنا تھا کہ ملزم کے خلاف تھانہ گولڑہ میں انسدادِ دہشت گردی سمیت مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں