ژوب گریژن پر حملہ کے بعد شہر میں تعلیمی ادارے 3 دنوں کے لیے بند

چھاؤنی میں بدھ کے روز ہونے والے دہشت گرد حملے میں شہید جوانوں کی تعداد 9 ہو گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

شمالی بلوچستان کے ضلع ژوب میں انتظامیہ نے سرکاری و نجی تعلیمی اداروں سمیت بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام سینٹرز بھی 3 دن کے لیے بند رہنے کا اعلان کیا ہے۔

ادھر بلوچستان میں ژوب گیریژن پر حملے میں شہید سکیورٹی اہلکاروں کی تعداد 9 ہو گئی۔

ڈپٹی کمشنر ژوب نے گزشتہ روز ژوب چھاؤنی پر حملے کے پس نظر سرکاری و نجی تعلیمی اداروں بشمول اسکول، کالج اور یونیورسٹی بند رکھنے کا اعلامیہ جاری کر دیا ہے۔

ڈپٹی کمشنر کے اعلامیہ کے مطابق ضلع بھر میں سرکاری ونجی تعلیمی ادارے اور بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام سینٹرز جمعرات سے ہفتہ تک 3 روز کے لیے بند رہیں گے۔

اعلامیہ ڈپٹی کمشنر آفس
اعلامیہ ڈپٹی کمشنر آفس

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق بدھ کے روز صبح سویرے دہشت گردوں نے شمالی بلوچستان میں ژوب گیریژن پر حملہ کیا، دہشت گردوں کی تنصیب میں گھسنے کی ابتدائی کوشش کو ڈیوٹی پر موجود سیکیورٹی اہلکاروں نے ناکام بنا دیا۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ ژوب کینٹ میں کلیئرنس آپریشن مکمل کر لیا گیا ہے، آپریشن کے دوران مجموعی طور پر 5 دہشت گردوں کو جہنم واصل کیا گیا۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ مزید پانچ جوان زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جام شہادت نوش کر گئے ہیں، ژوب آپریشن کے دوران شہید ہونے والے جوانوں کی تعداد 9 تک پہنچ گئی، فورسز اور قوم دشمن کی مذموم کوششوں کو ناکام بنانے کے لیے پرعزم ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں