سویڈن میں قرآن پاک کی بے حرمتی کے واقعہ کی شدید مذمت کرتے ہیں: پاکستان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

پاکستان نے سویڈن میں قرآن پاک کی سرعام بے حرمتی کے اسلامو فوبیا پر مبنی ایک اور واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ نے جمعرات کو ایک بیان میں کہا کہ آزادی اظہار، رائے اور احتجاج کی آڑ میں مذہبی منافرت کی سوچی سمجھی اور اشتعال انگیز کارروائیوں کی اجازت کو جائز قرار نہیں دیا جا سکتا۔

ترجمان نے کہا کہ اس طرح کے اسلامو فوبک واقعات کا پریشان کن اعادہ، جس نے دنیا بھر میں 2 ارب سے زائد مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی ہے، قانونی اور اخلاقی طور پر قابل مذمت ہے۔

وزیر اعظم کی مذمت

وزیر اعظم شہباز شریف کا سویڈن میں قرآن کریم کی بے حرمتی کے واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے او آئی سی کے پلیٹ فارم سے اس شیطانیت کے تدارک کی مشترکہ حکمت عملی بنانے کا مطالبہ کیا۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ "واقعات کا تسلسل اور ترتیب ثبوت ہے کہ یہ اظہار کا نہیں بلکہ سیاسی اور شیطانی ایجنڈے کا حصہ ہے۔ پورے عالم اسلام اور مسیحی دنیا کو مل کر اس سازش کو روکنا ہوگا۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں