توشہ خانہ کیس: عمران خان کو تین سال اور ایک لاکھ روپے جرمانے کی سزا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسلام آباد کی سیشن کورٹ نے پاکستان تحریک انصاف [پی ٹی آئی] کے چیئرمین عمران خان کے خلاف توشہ خانہ فوجداری کارروائی کے مقدمے میں سابق وزیر اعظم کو تین سال کی سزا سناتے ہوئے انہیں کرپٹ پریکٹس کا مرتکب قرار دیا ہے۔

عدالت نے فیصلہ میں کہا ہے کہ ’ملزم نے الیکشن کمیشن میں جھوٹی تفصیلات جمع کروائیں، ملزم کرپٹ پریکٹسز کے مرتکب پائے گئے ہیں۔‘

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹس اسلام آباد نے چیئرمین پی ٹی آئی کیخلاف توشہ خانہ فوجداری کارروائی کیس پر محفوظ فیصلہ سنا دیا۔

چیئرمین پی ٹی آئی کی توشہ خانہ کیس ناقابل سماعت ہونے سے متعلق درخواست مسترد کردی گئی ہے۔

جج ہمایوں دلاور نے فیصلہ دیا کہ ملزم کیخلاف جرم ثابت ہوتا ہے،ملزم نے الیکشن کمیشن میں جھوٹی تفصیلات جمع کرائیں،ملزم کرپٹ پریکٹسز کے مرتکب پائے گئے ہیں۔

عدالت نے سابق وزیر اعظم کے وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے اسلام آباد پولیس کو انہیں گرفتار کرنے کا حکم دیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں