بینکوں کے ذریعے رقوم بھیجنے والے سمندر پار پاکستانیوں کے لیے انعامی سکیم کا اعلان

’سکیم کے تحت ترسیلات زر بھیجنے والوں کو پوائنٹس ملیں گے جنہیں متعدد سرکاری اداروں سے خدمات اور اشیا کی رعایتی نرخوں پر خریداری میں استعمال کیا جا سکے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

پاکستان کی نگراں حکومت نے قانونی ذرائع سے ترسیلات زر بھیجنے والے اوورسیز پاکستانیوں کے لیے نئی سکیم کا اعلان کیا ہے۔

اس امر کا اعلان نگراں وزیر خزانہ ڈاکٹر شمشاد اختر نے ایک بریفنگ میں کیا۔ انہوں نے بتایا "کہ حکومت نے سکیم کو فروغ دینے کے لیے 80 ارب روپے مختص کیے ہیں اور اس مد میں سٹیٹ بینک آف پاکستان کو 20 ارب روپے منتقل کیے جا چکے ہیں۔"

انہوں نے مزید کہا کہ 'حکومت نے قانونی ذرائع سے ترسیلات زر کو فروغ دینے کے لیے پانچ اقسام کی سکیموں کا اعلان کیا ہے۔'

نگراں وزیر خزانہ کے مطابق 'اس سکیم کے تحت 100 ڈالر سے زائد ترسیلات زر کو بغیر کسی فیس کے یہاں وصول کیا جا سکے گا۔'

'سکیم کے مطابق ترسیلات زر بھیجنے والوں کو پوائنٹس دیے جائیں گے جن کے تحت وہ کئی سرکاری اداروں سے خدمات اور اشیا رعایتی نرخوں پر حاصل کر سکیں گے۔'

ڈاکٹر شمشاد اختر نے کہا کہ 'اس سکیم کے مطابق حکومت پاکستان ایکسچینج کمپنیوں کے لیے بھی مراعات فراہم کرے گی۔'

’اس سکیم کے تحت مالی اداروں کی جانب سے قانونی ذرائع سے ترسیلات زر بھیجنے کے حوالے سے مارکیٹنگ کے بدلے مراعات دی جائیں گی۔'

نگراں وزیر خزانہ کا کہنا تھا کہ 'سکیم کے تحت قرعہ اندازی کی جائے گی اور اس کے تحت قانونی ذرائع کے ذریعے زیادہ ترسیلات زر بھیجنے والوں کو نقد انعامات بھی دیے جائیں گے۔'

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں