اسلامی تعاون تنظیم کی پاکستان میں تباہ کن بم دھماکے کی مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) نے پاکستان کے شہر مستونگ میں جمعہ کو تباہ کن بم دھماکے کی شدید مذمت کی ہے۔

صوبہ بلوچستان کے شہر مستونگ میں پیغمبراسلام صلی اللہ علیہ وسلم کے یومِ ولادت کے موقع پر ایک مذہبی جلوس کے قریب ایک حملہ آور بمبار نے خود کو دھماکے سے اڑا دیا تھا جس سے کم سے کم ساٹھ افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

او آئی سی کے سیکریٹری جنرل حسین ابراہیم طہٰ نے اتوار کو ایک بیان میں ایسے گھناؤنے واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہےاور پاکستان کی حکومت،عوام اور متاثرہ خاندانوں سے جانی نقصان پردلی تعزیت کا اظہار کیا ہے۔

سیکریٹری جنرل نے دہشت گردی کی تمام شکلوں کے خلاف او آئی سی کے مؤقف کا اعادہ کیا اور دہشت گردی کے خلاف پاکستان کی جنگ کی حمایت کا اظہار کیا ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق دوروز پہلے ہونے والے تباہ کن بم دھماکے میں مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 59 ہو گئی تھی۔پاکستانی حکومت نے بھارتی خفیہ ایجنسی را پر دہشت گردی کے اس واقعے میں ملوّث ہونے کا الزام عاید کیا ہے۔

ابھی تک کسی گروپ نے اس حملے کی ذمے داری قبول نہیں کی ہے۔پاکستان میں آیندہ سال جنوری میں ہونے والے عام انتخابات سے قبل دہشت گردی کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے اور دہشت گرد خاص طور صوبہ خیبرپختونخوا اور بلوچستان میں عام شہریوں اور سکیورٹی فورسز کو اپنے حملوں میں نشانہ بنا رہے ہیں.

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں