اسد عمر، علیمہ خان، عظمیٰ خان کی عبوری ضمانت میں 16 اکتوبر تک توسیع

جناح ہاؤس جلاؤ گھیراؤ کیس میں عمران خان کی بہنیں قصور وار قرار دے دی گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

لاہور کی انسدادِ دہشت گردی کی عدالت نے جناح ہاؤaس جلاؤ گھیراؤ کیس میں سابق وفاقی وزیر اسد عمر، چیئرمین پی ٹی آئی کی بہنوں علیمہ خان اور عظمی خان کی عبوری ضمانت میں 16 اکتوبر تک توسیع کر دی۔

لاہور کی انسدادِ دہشت گردی عدالت میں جناح ہاؤس جلاؤ گھیراؤ کیس کی سماعت ہوئی۔ تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان جناح ہائوس حملہ کیس میں قصور وار پائے گئے ہیں، جے آئی ٹی نے تینوں ملزمان کو قصور وار لکھا ہے، پولیس کو تفتیش کے لئے تینوں کی گرفتاری مطلوب ہے، علمیہ خان کی موقع پر موجودگی پائی گئی۔

ملزمان کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ علیمہ خان اور عظمیٰ خان مقدمے میں نامزد نہیں، بیان دکھائے جائیں جن کی روشنی میں ہمیں قصور وار قرار دیا گیا۔ تفتیشی افسر نے کہا کہ ہم ان کو 161 کے تمام بیان دکھا دیتے ہیں۔

چیئرمین پی ٹی آئی کی بہن علیمہ خان روسٹرم پر آ کر کہا کہ ہمیں انصاف دیا جائے روز پیشی پرآتے ہیں، اگر جیل میں بھیجنے سے انصاف ہوتا ہے تو بھیج دیں۔

وکیل برہان معظم نے چیئرمین پی ٹی آئی کی بہن کو مزید گفتگو کرنے سے روکا جس پر ان کا کہنا تھا کہ ہم کیا مانگ رہے ہیں انصاف ہی مانگ رہے ہیں۔

عدالت نے کارروائی کچھ دیر تک ملتوی کر دی۔ بعد ازاں سماعت کے دوبارہ آغاز پر عدالت نے وکلا کو حتمی دلائل کے لیے طلب کرتے ہوئے ملزمان کی عبوری ضمانتوں میں 16 اکتوبر تک توسیع کر دی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں