معیشت کو نقصان پہنچانے والے اقدامات کے خلاف ایکشن جاری رہے گا: آرمی چیف

چیف آف آرمی اسٹاف جنرل سید عاصم منیر کا کراچی کا دورہ، صوبائی ایپکس کمیٹی کے اجلاس میں شرکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

پاکستان فوج کے سپہ سالار جنرل سید عاصم منیر نے کہا ہے کہ معیشت کو نقصان پہنچانے والے اقدامات کے خلاف ایکشن جاری رہے گا۔

فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ’’آئی ایس پی آر‘‘ کے مطابق چیف آف آرمی اسٹاف جنرل سید عاصم منیر نے جمعہ کو کراچی کا دورہ کیا اور نگراں وزیر اعلی سندھ جسٹس (ریٹائرڈ) مقبول باقر کے ہمراہ صوبائی ایپکس کمیٹی کے اجلاس میں شرکت کی۔

آرمی چیف کو نیشنل ایکشن پلان، کچے میں آپریشن اور سی پیک میں کام کرنے والے غیر ملکی شہریوں سے متعلق بریفنگ دی گئی۔ آرمی چیف کو غیر قانونی طور پر مقیم غیر ملکیوں کو واپس بھجوانے اور غیر ملکی کرنسی کو ریگولرائز کرنے کے حوالے سے پلان پر بھی بریف کیا گیا۔

اجلاس میں کراچی ٹرانسفارمیشن پلان، سندھ میں ایس آئی ایف سی کے اقدامات پر پیش رفت اور گرین سندھ کے اقدامات زیر غور آئے۔ آرمی چیف نے اس بات پر زور دیا کہ قانون نافذ کرنے والے ادارے اور دیگر سرکاری محکمے غیر قانونی سرگرمیوں کے اسپیکٹرم کے خلاف کارروائیوں کو پوری طاقت کے ساتھ جاری رکھیں گے تاکہ وسائل کی چوری اور ان سرگرمیوں کی وجہ سے ملک کو ہونے والے معاشی نقصانات کو روکا جا سکے۔

اپیکس کمیٹی کے اجلاس کے دوران آرمی چیف نے تاریخی اقدامات کے اثرات کے لیے تمام متعلقہ محکموں کے درمیان ہم آہنگی کی ضرورت پر زور دیا۔ شرکاء نے اس بات کا اعادہ کیا کہ ریاستی ادارے، سرکاری محکمے اور عوام صوبے کی ترقی اور خوشحالی کے لیے متحد ہیں۔

اس موقع پر آرمی چیف جنرل عاصم منیر کا کہنا تھا کہ غیر قانونی کارروائیوں کی وجہ سے معیشت کو نقصان پہنچ رہا ہے، سکیورٹی ادارے غیر قانونی اقدامات کے خلاف کارروائی جاری رکھیں گے۔ قبل ازیں آرمی چیف کی آمد پر کور کمانڈر کراچی نے ان کا استقبال کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں