" دبئی ٹیک شو کو عالمی کمپنیوں سے مربوط ہونے کا ایک بہترین پلیٹ فارم قرار دیا"

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
5 منٹس read

پاکستانی آئی ٹی فرمز کے نمائندوں نے منگل کے روز دبئی میں حال ہی میں منعقدہ گائیٹیکس گلوبل ٹیک نمائش کو ایک "زبردست" پلیٹ فارم قرار دیا جس کے ذریعے پاکستانی کمپنیاں عالمی کمپنیوں سے منسلک ہو کر ان کے ساتھ مفاہمت کی یادداشتوں اور شراکت داری کے معاہدوں پر دستخط کر سکتی ہیں۔

گلف انفارمیشن ٹیکنالوجی نمائش (گائیٹیکس) گلوبل کا 43 واں ایڈیشن 16 سے 20 اکتوبر تک دبئی میں منعقد ہوا جس میں دنیا بھر کے 170 ممالک کے 6,000 سے زیادہ نمائش کنندگان اور کم از کم 180,000 ٹیک سربراہان نے شرکت کی۔ دنیا بھر میں ٹیک کمپنیوں کے لیے ایک سرکردہ پلیٹ فارم کے طور پر کام کرتے ہوئے گائیٹیکس گلوبل 2023 نے اسٹارٹ اپس کو موقع فراہم کیا کہ وہ کلیدی اقتصادی شعبوں میں تازہ ترین پیشرفت اور اختراعات سے پردہ اٹھائیں۔ اس سال کی تھیم مصنوعی ذہانت (اے آئی) ٹیکنالوجی اور اس کی اختراعات پر مرکوز ہے۔

پاکستان سافٹ ویئر ہاؤسز ایسوسی ایشن (پاشا) کے چیئرمین محمد زوہیب خان نے کہا کہ تقریب میں 80 سے زائد پاکستانی کمپنیوں اور اسٹارٹ اپس نے شرکت کی۔

خان نے عرب نیوز کو بتایا۔ "گائیٹیکس بہت زبردست تھا اور اس سال پاکستان کی نمائندگی تمام ممالک میں سب سے زیادہ تھی۔ تقریباً 83 کمپنیوں اور سٹارٹ اپس نے 500 سے زائد مندوبین کے ساتھ وہاں اپنے سٹال لگائے جبکہ اعلیٰ کمپنیوں کے سربراہان نے اس تقریب میں شرکت کی۔"

خان نے کہا کہ 27 سے زیادہ کمپنیوں نے پاشا کے بینر تلے حصہ لیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ان میں سے کچھ کو ایک غیر منافع بخش کمپنی اگنائیٹ کے بینر تلے حصہ لیا جو حکومتِ پاکستان کی ملکیت ہے اور آئی ٹی وزارت کے زیرِ انتظام ہے- جبکہ دیگر نے آزادانہ طور پر نمائش میں حصہ لیا۔

خان نے کہا، "دنیا بھر کی کمپنیوں کے ساتھ درجنوں مفاہمت ناموں، معاہدوں اور شراکت داریوں پر دستخط کیے گئے۔"

اگنائیٹ ترجمان ندیم ناصر نے کہا کہ گائیٹٰکس نے ہر سال مستقل طور پر آئی ٹی کے بارے میں عالمی تناظر پیش کیا جو اگنائیٹ سٹارٹ اپ کے لیے ایک پلیٹ فارم کے طور پر کام کرتا ہے۔

ناصر نے عرب نیوز کو بتایا، "ہمارے سٹارٹ اپس نے کامیابی کے ساتھ مقامی اور بین الاقوامی سرمایہ کاروں کے ساتھ بامعنی روابط قائم کیے ہیں جو قابلِ قدر شراکت داریوں میں تبدیل ہوئے ہیں۔"

16 اکتوبر کو پاکستان کے نگراں آئی ٹی وزیر عمر سیف نے کہا کہ ملک کی کاروباری صلاحیت کو ظاہر کرنے کے لیے گائیٹٰکس میں پاکستان کے پاس "سب سے بڑے نمائشی لاؤنجز میں سے ایک" ہے۔

ناصر نے کہا، "اس سال گائیٹٰکس کے ایکسپینڈ نارتھ سٹار پویلین میں دس ٹیک اسٹارٹ اپس کی نمائش کی گئی۔"

لاہور کی ایک سافٹ ویئر ڈویلپمنٹ کمپنی ایکسی لینس ڈیلیورڈ (ای ایکس ڈی) گروپ کے چیئرمین سجاد سید نے کہا کہ گائیٹٰکس آئی ٹی کمپنیوں اور صارفین دونوں کو ایکسپوزر فراہم کرتی ہے۔

سید نے عرب نیوز کو بتایا، "نمائش کے دوران ہماری بین الاقوامی نشوونما آسمان کو چھونے لگی کیونکہ ہم نے خلیجی ممالک کی کمپنیوں کے ساتھ تین معاہدوں اور چھ یادداشتوں پر دستخط کیے ۔ ہم نے ایکسپرٹس ویژن کنسلٹنگ (ای وی سی) کے ساتھ ایک معاہدہ کیا جو کہ ایک معروف سعودی ٹیکنالوجی کمپنی ہے۔ ایک بحرینی کمپنی تھنک سمارٹ اور ایک عراقی کمپنی کو سافٹ ویئر تیار کر کے دینے کے لیے معاہدہ کیا ہے۔"

اسلام آباد میں قائم ایک اسٹارٹ اپ گیمیوٹیویٹی کھلاڑیوں کو گیمز خریدنے، بیچنے اور تجارت کرنے کے لیے ایک محفوظ اور شفاف مارکیٹ فراہم کرتا ہے۔ اس کے بانی نبیل خیال نے بھی عالمی ٹیک شو میں شرکت کی۔

انہوں نے عرب نیوز کو بتایا، "پاکستانی آئی ٹی کمپنیوں کے لیے یہ ایک بہترین پلیٹ فارم ہے جہاں وہ بین الاقوامی شناخت حاصل کر سکتی ہیں اور بین الاقوامی کمپنیوں کے ساتھ بیٹھ کر سرمایہ کاروں کی تلاش، معاہدوں اور شراکت داریوں پر دستخط کر سکتی ہیں۔"

خیال نے کہا کہ ٹیک نمائش کے دوران گیمیوٹیویٹی نے گیمنگ انڈسٹری میں شراکت داری سے متعلق دو یورپی کمپنیوں کے ساتھ سودوں کا آغاز کیا اور اب انہیں حتمی شکل دینے کے قریب تھی۔

کلام فار سلوشنز (کے 4 ایس) سٹارٹ اپ کی بانی روزینہ صالحہ نے کہا کہ گائیٹیکس میں پہلی دفعہ شرکت نے ان کی کمپنی کو بصیرت اور ایسے خیالات کا خزانہ عطا کیا جو ان کے کاروبار کو ایک سمت دے گا۔

انہوں نے عرب نیوز کو بتایا، "اس نمائش نے مستقبل کی تصویر دکھانے والے ایک طاقتور عدسے کا کام کیا جس سے ہمیں جدید اختراعات اور صنعتی رجحانات کی جھلک دیکھنے کو ملتی ہے جو آئندہ سالوں کی وضاحت کریں گے۔ کے 4 ایس نے نمائش کے دوران سات شراکتوں اور تین گاہکوں کے ساتھ سودوں پر دستخط کرکے ایک شاندار آغاز کیا۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں