اسلام آباد: غزہ ملین مارچ روکنے کے لئے پولیس کا جماعت اسلامی کے خلاف کریک ڈاؤن

ضلعی امیر نصراللہ رندھاوا مرکزی انجمن تاجران کے صدر کاشف چوہدری سمیت کئی کارکنان گرفتار؛ سراج الحق، امیر العظیم، سینیٹر مشتاق احمد اور میاں محمد اسلم کا ردعمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

وفاقی دارالحکومت میں غزہ ملین مارچ کا جلسہ روکنے کے لئے پولیس کا جماعت اسلامی کے خلاف کریک ڈاؤن، ضلعی امیر نصراللہ رندھاوا مرکزی انجمن تاجران کے صدر کاشف چوہدری سمیت کئی کارکنوں کو گرفتار کر لیا گیا۔ کارروائی نگران وزیر داخلہ سرفراز بگٹی کی ہدایت پر کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں جماعت اسلامی کے زیر اہتمام اتوار کو ہونے والے غزہ ملین مارچ کے جلسہ کا سٹیج بنانے کے لئے ضلعی امیر نصراللہ رندھاوا مرکزی انجمن تاجران کے صدر ونائب امیر جماعت کاشف چوہدری کی قیادت میں کارکنان آبپارہ کے قریب کشمیر ہائی وے پر مطلوبہ سامان لے کر پہنچے۔ کچھ دیر بعد وہاں پولیس اور رینجرز پہنچ گئی اور جلسہ کے منتظمین کو سٹیج بنانے سے روک دیا۔ پولیس نے سامان قبضہ میں لیتے ہوئے نصراللہ رندھاوا، کاشف چوہدری اور جماعت اسلامی کے کئی کارکنان کو گرفتار کر لیا۔

امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے ردعمل میں کہا ہے کہ غزہ مارچ کی تیاریاں روکنا اور اسلام آباد کے امیر نصراللہ رندھاوا اور تاجر رہنما کاشف چوہدری کی گرفتاری انتہائی قابل مذمت ہے۔ نگران حکومت اور ادارے کس کو خوش کرنا چاہتے ہیں؟ سوشل میڈیا پلیٹ فارم ایکس پر ایک بیان میں انھوں نے کہا ہے کہ امریکہ کے بعد کیا اب اسرائیل نوازی بھی ان کے لیے کوئی قابل شرم بات نہیں رہی؟ کارکنان کو فوری رہا کیا جائے۔ انھوں نے کہا کہ حکومت رکاوٹیں ڈالنے اور گرفتاریاں کرکے اپنے منہ پر کالک نہ ملتی تو بہتر ہوتا۔ فلسطین اور غزہ میں ہونے والے مظالم کے خلاف پوری قوم یک زبان ہے۔ دنیا سراپا احتجاج ہے۔ امریکہ کو خوش کرنے کا حکومتی اقدام افسوسناک اور انتہائی قابل مذمت ہے۔

جماعت کے سیکرٹری جنرل امیر العظیم نے کہا ہے کہ غزہ لہو لہو حکومت پاکستان خاموش۔ تازہ ترین حکومت پاکستان کا اقدام کہ اسلام اباد میں غزہ مارچ کی تیاریوں پر پولیس نے حملہ کرتے ہوئے نصراللہ رندھاوا امیر جماعت اسلامی اسلام اباد سمیت بیسیوں کارکنوں کو گرفتار کر لیا۔ نائب امیر میاں اسلم نے کہا ہے کہ اسلام آباد میں جماعت اسلامی کے غزہ مارچ کی تیاریوں پر ریاستی ادارے دھاوا بول کر کارکنان اور قیادت کو سامان سمیت اغوا کر رہے ہیں۔ یہ دہشت گردی، نگران حکومت کی امریکہ و اسرائیل نوازی بدترین فاشزم ہے۔ پولیس اور انتظامیہ ہوش کے ناخن لے، جماعت اسلامی کو دبانا آسان نہیں ہوگا۔

سینیٹر مشتاق احمد خان نے ایکس پر پیغام میں سوال کیا ہے کہ کیا نگران حکومت امریکہ اور اسرائیل کو خوش کر رہی ہے؟ یہ عوام کے اظہار آزادی رائے کے دستوری حق پر ڈاکہ اور حکومتی فاشزم ہے،جماعت اسلامی کا غزہ مارچ ہر صورت ہوگا۔ حکومت فوری طور پر گرفتار شدگان کو رہا کرے اور معافی مانگے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں