صدر مملکت کا فلسطینی ہم منصب سے ٹیلیفونک رابطہ؛ اسرائیلی مظالم کی مذمت

پاکستان اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق مسئلہ فلسطین کے حل کے لیے فلسطین کی حمایت جاری رکھے گا: ڈاکٹر عارف علوی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے اپنے فلسطینی ہم منصب سے ٹیلیفونک رابطہ کر کے غزہ میں اسرائیلی مظالم کی مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ پاکستان اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق مسئلہ فلسطین کے حل کے لیے فلسطین کی حمایت جاری رکھے گا۔

ایوان صدر سے جاری تفصیلات کے مطابق صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے اپنے فلسطینی ہم منصب محمود عباس سے ٹیلیفون پر رابطہ کیا اور ان سے غزہ سمیت فلسطین کی صورتحال پر بات چیت کی اس موقع پر صدر نے غزہ میں اسرائیلی مظالم کی مذمت کرتے ہوئے اسرائیل کی قاتلانہ مہم روکنے کے لیے عالمی برادری کی جانب سے عدم کارروائی پر افسوس کا اظہار کیا۔ ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ وحشیانہ اقدامات کے نتیجے میں خواتین، بچوں، شعبہ صحت، صحافیوں اور اقوام متحدہ کے امدادی کارکنوں سمیت ہزاروں فلسطینی جاں بحق ہوئے ہیں۔

صدر مملکت نے کہا کہ غزہ کی موجودہ صورتحال اسرائیل کی دہائیوں کی نسلی تفریق اور غیر منصفانہ پالیسیوں کا ردعمل ہے، مسلمانوں کی نسل کشی اور انہیں اپنے علاقوں سے بے دخل کرنے پر اسرائیل کی مذمت کرتے ہیں۔ صدر عارف علوی نے غزہ کے عوام کے خلاف اسرائیل کی قاتلانہ مہم روکنے کے لیے عالمی برادری کی جانب سے عدم کارروائی پر افسوس کا اظہار کیا۔ ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ پاکستان اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق مسئلہ فلسطین کے حل کے لیے فلسطین کی حمایت جاری رکھے گا۔

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ عالمی برادری فوری جنگ بندی، غزہ تک انسانی ہمدردی کی بنیاد پر راہداری کھولنے کے لیے اقدامات لے، عالمی برادری فلسطینیوں کی اپنے وطن سے مزید بے دخلی روکنے، سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ فلسطین کے مستقل حل کے لیے کوششیں کرے۔ انہوں نے کہا کہ اگر دو ریاستی حل اسرائیل کے لیے قابل قبول نہیں تو پھر ایک ریاستی حل ہی واحد راستہ رہ جاتا ہے، ایک ریاست میں یہودی، مسلمان اور عیسائیوں کی اچھی خاصی تعداد مساوی سیاسی حقوق کے ساتھ رہ سکتی ہے۔

علاوہ ازیں فلسطینی صدر محمود عباس نے کہا کہ اسرائیل غزہ میں نسل کشی کر رہا ہے۔ فلسطینی صدر نے انسانی امداد کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لیے غزہ کے لیے راہداری کھولنے کا بھی مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ غزہ کے لوگوں کے لیے خوراک، ادویات اور بجلی دستیاب نہیں ہے۔ فلسطینی صدر محمود عباس نے فلسطین کی حمایت اور انسانی امداد بھیجنے پر پاکستان کا شکریہ ادا کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں