شدت پسند اسرائیلی فلسطینیوں کو نکال کر گریٹر اسرائیل بنانا چاہتے ہیں: منیر اکرم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم کا کہنا ہے کہ اسرائیل پر دباؤ ڈالنے کیلئے پاکستان اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) کے اجلاس میں تجاویز پیش کرے گا۔

جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم نے کہا کہ اسرائیل نے فلسطین کو اوپن پریزن بنائے رکھا، اسرائیل نے پہلے ایک طریقے سے فلسطین پر قبضہ کیا اور اب دوسرے طریقے سے قبضہ کر رہا ہے۔

منیراکرم نے بتایا کہ پہلے جب اسرائیل نے قبضے کی کوشش کی تو وہاں گوریلا جنگ شروع ہوگئی، آگے جاکر اگر قبضہ ہوتا ہے تو دیکھتے ہیں کہ وہ کیسےکر سکیں گے کیونکہ اسرائیل کے شدت پسند رہنماچاہتے ہیں کہ غزہ اور مغربی کنارے میں موجود فلسطینیوں کو نکالاجائے اور اس خطے پر قبضہ کرکے گریٹر اسرائیل بنایا جائے۔

پاکستانی مندوب کا کہنا تھا دیکھنا ہوگا کہ اس جنگ کے بعد اسرائیل میں کونسی لیڈر شپ آتی ہے کیونکہ کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ نیتن ہایو ناکام ہو چکے ہیں، اگر اسرائیل میں جدت پسند سوچ کی حامل قیادت آتی ہے تو شاید بات مذاکرات کی طرف چلی جائے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسرائیل پر دباؤ ڈالنے کیلئے پاکستان او آئی سی میں تجاویز پیش کرے گا، جو صورتحال کشمیر میں ہے وہی صورتحال فلسطین میں ہے، اس لیے ہم نے فلسطین کے معاملے پر لیڈ لی ہے اور انصاف کیلئے ہماری کوشش جاری رہے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں