’’پاکستان کے اسرائیل کے ساتھ کسی قسم کے تعلقات نہیں ہیں‘‘

مسئلہ فلسطین اس وقت پوری دنیا کا مسئلہ ہے، اہل فلسطین کو تنہا نہیں چھوڑیں گے: حافظ طاہر محمود اشرفی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

وزیر اعظم کے نمائندہ خصوصی برائے بین المذاہب وہم آہنگی حافظ طاہر محمود اشرفی نے دو ٹوک طور پر کہا ہے کہ پاکستان کے اسرائیل کے ساتھ کسی قسم کے تعلقات نہیں ہیں، مسئلہ فلسطین اس وقت پوری دنیا کا مسئلہ ہے، اہل فلسطین کو تنہا نہ چھوڑیں گے نہ چھوڑا جا سکتا ہے۔

پیر کو اسلام آباد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم کے نمائندہ خصوصی برائے بین المذاہب وہم آہنگی حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ 7 اکتوبر کو غزہ کا واقعہ ہوا، وزارت خارجہ نے اسی دن فلسطین کے ساتھ یکجہتی کا اعادہ کیا، وزیر خارجہ نے پریس کانفرنس کی اور فلسطین کے ساتھ بھرپور حمایت کا اظہار کیا جبکہ پاکستان میں حکومتی سطح پر پاکستان کی جانب سے فلسطین کے لیے امداد روانہ کی گئی ۔

انہوں نے آرمی چیف کے ساتھ علما اور مشائخ کی حالیہ ملاقات کے بارے میں کہا کہ یہ ملاقات بہت مفید اور کامیاب رہی۔ تمام علماء و مشائخ نے آرمی چیف کو مکمل تعاون اور حمایت کا یقین دلایا۔

انہوں نے کہا کہ کور کمانڈر کانفرنس کا اعلامیہ میں بھی مسئلہ فلسطین سر فہرست سامنے آیا۔ او آئی سی اجلاس میں بھی پاکستان کا واضح دو ٹوک موقف سامنے آیا ہے۔

وزیر اعظم پاکستان نے براہ راست فلسطینی صدر سے رابطہ کیا۔ وہاں سب سے پہلے ملاقات بھی پاکستانی وزیر اعظم نے فلسطینی صدر سے کی۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ فلسطین اور مسئلہ کشمیر ہماری اساس ہیں اس سے رو گردانی ممکن ہی نہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں