پاکستانی خواتین کرکٹ ٹیم کی نیوزی لینڈ کے خلاف تاریخی فتح

فاطمہ ثناء اور شوال ذوالفقار کی شاندار کارکردگی،پہلے ٹی 20 آئی میں پاکستان کی سات وکٹوں سے فتح، فاطمہ ثناء کی تین وکٹیں اور شوال کے 41 رنز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستان ویمن ٹیم نے اتوار کو تاریخ رقم کرتے ہوئے نیوزی لینڈ کو پہلے ٹی ٹوئنٹی آئی میں سات وکٹوں سے شکست دے کر ڈونیڈن کی یونیورسٹی آف اوٹاگو اوول میں کامیابی حاصل کی۔

128 رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستان کی اوپننگ جوڑی شوال ذوالفقار اور منیبہ علی نے اننگز کو 40 رنز کا عمدہ آغاز فراہم کیا۔ منیبہ (24 گیندوں پر 23، چار چوکے) پویلین لوٹنے والی پہلی بلے باز تھیں۔

اس مرحلے پر کپتان ندا ڈار خود بیٹنگ کے لیے آ گئیں اور دائیں ہاتھ کی بلے باز شوال کے ساتھ دوسری وکٹ کے لیے 51 رنز بنائے۔ نیوزی لینڈ کی سرزمین پر اپنا پہلا اور مجموعی طور پر چھٹا ٹی 20 آئی کھیلتے ہوئے 18 سالہ شوال نے 42 گیندوں پر 7 چوکوں کی مدد سے اپنے کریئر کے بہترین 41 رنز بنائے۔

13ویں اوور کے اختتام پر سکور بورڈ پر 91 رنز کے ساتھ شوال کے آؤٹ ہو جانے کے بعد کپتان ندا بھی 14 گیندوں پر 23 رنز بنانے کے بعد آؤٹ ہو گئیں جس میں ایک چوکا اور ایک چھکا بھی شامل تھا۔

مسلسل دو وکٹیں گرنے کے ساتھ ہی بسمہ معروف اور عالیہ ریاض کی تجربہ کار جوڑی نے مل کر ٹیم کو سات وکٹوں سے فتح دلائی جبکہ اننگز کی 10 گیندیں باقی تھیں۔ عالیہ 12 گیندوں پر 25 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہیں۔ ان کی اننگز میں دو چوکے اور ایک چھکا شامل تھا۔ یہ چھکا انہوں نے 19ویں اوور کی دوسری گیند پر لگا کر میچ میں فتح دلائی۔ بسمہ 18 گیندوں پر ایک چوکے کے ساتھ 13 رنز بنا کر ناقابلِ شکست رہیں۔

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اوٹاگو اوول کے مناظر کی وڈیو کے ساتھ ایکس پر لکھا، "ڈونیڈن میں فتح کا ماحول۔ ہم پہلے ٹی 20 آئی میں ملنے والی سپورٹ کے لیے شکرگذار ہیں۔"

یہ پاکستان ویمن ٹیم کی کرکٹ کی اس طرز میں نیوزی لینڈ کے خلاف اولین فتح ہے۔

قبل ازیں پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کرنے والی نیوزی لینڈ کو مہمان ٹیم کی عمدہ باؤلنگ نے چھ وکٹوں کے نقصان پر 127 رنز تک محدود کر رکھا۔ دائیں ہاتھ کی تیز رفتار بولر فاطمہ ثناء جو چوٹ کی وجہ سے دورۂ بنگلہ دیش سے باہر ہوگئی تھیں، نے ابر آلود حالات کا فائدہ اٹھاتے ہوئے چار اوورز میں صرف 18 رنز دے کر تین وکٹیں حاصل کیں۔ ندا، ڈیانا بیگ اور عالیہ نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے میڈی گرین سب سے زیادہ رن بنانے والی کھلاڑی تھیں جنہوں نے 28 گیندوں پر 4 چوکے لگا کر ناٹ آؤٹ 44 رنز بنائے۔

پاکستان اب نیوزی لینڈ کے خلاف دوسرا ٹی 20 آئی منگل کو اسی مقام پر کھیلے گا جب کہ سیریز کا تیسرا اور آخری ٹی 20 آئی 9 دسمبر کو کوئنس ٹاؤن میں کھیلا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں