سلامتی کونسل سے غزہ میں جنگ بندی کی اپیل نہ ہونے پر مایوسی ہوئی: پاکستان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

پاکستان نے سلامتی کونسل کی جانب سے ایک بارپھر غزہ میں جنگ بندی کی اپیل نہ کرنے پرمایوسی کااظہارکرتے ہوئے انسانی المیہ سے بچنے کے لیے فوری اور غیر مشروط جنگ بندی کے مطالبے کا اعادہ کیاہے۔

دفترخارجہ کے ترجمان نے ہفتہ اسلام آباد سے جاری بیان میں کہاہے کہ غزہ میں بڑے پیمانے پرانسانی المیے کے باوجود سلامتی کونسل جنگ بندی کی اپیل میں ناکام رہی جس سے پاکستان کومایوسی ہوئی ہے۔

ترجمان نے کہاکہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کی جانب سے اقوام متحدہ کے چارٹر کے آرٹیکل 99 کی درخواست اور غزہ میں انسانی تباہی بارے وارننگ کے باوجود سلامتی کونسل بین الاقوامی امن و سلامتی کو برقرار رکھنے کی اپنی بنیادی ذمہ داری ادا کرنے میں ناکام رہی ہے۔

ترجمان نے کہاکہ غزہ کے محصور عوام جس اجتماعی سزا کو برداشت کررہے ہیں وہ ناقابل قبول ہے اوراس کی مثال نہیں ملتی ۔

ترجمان نے کہاکہ غزہ کے عوام پر بلا تعطل بمباری کو طول دینے میں تعاون فراہم کرنے والوں پربھی بھاری زمہ داری عائد ہوتی ہے ۔

ترجمان نے انسانی المیہ سے بچنے کے لیے فوری اور غیر مشروط جنگ بندی کے مطالبے کا اعادہ کرتے ہوئے اسرائیل سے غزہ کے خلاف وحشیانہ حملے اور غیر انسانی محاصرہ ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں