باجوڑ میں پولیس کی گاڑی کے قریب دھماکہ، پانچ اہلکار جاں بحق، 10 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

خیبر پختونخوا کے شمالی ضلع باجوڑ میں انسدادِ پولیو ٹیم کی سکیورٹی پر مامور پولیس اہلکاروں کو دہشت گردوں نے نشانہ بنایا ہے۔

پولیس کے مطابق باجوڑ کے علاقے بیلوٹ فرش میں دھماکا ہوا ہے جس کے نتیجے میں پانچ پولیس اہل کار جاں بحق، جبکہ 10 سے زائد زخمی ہو گئے۔ باجوڑ پولیس نے بتایا کہ دھماکا پولیس کے ٹرک کے قریب ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پولیس اہلکارپولیو ٹیم کی سکیورٹی کے لیے جا رہے تھے کہ ان کی گاڑی دھماکے کی زد میں آ گئی، دھماکے کی اطلاع ملتے ہی پولیس اور امدادی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں جنہوں نے زخمیوں اور لاشوں کو خار ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

دھماکے کے بعد خار کے ہسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔ دھماکے کے بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر دہشت گردوں اور ان کے سہولت کاروں کی تلاش کیلئے سرچ آپریشن شروع کر دیا۔ فوری طور پر دھماکے کی نوعیت کا اندازہ نہیں ہو سکا۔

واضح رہے کہ ملک میں دہشت گردی کی لہر ایک بار پھر سر اٹھانے لگی ہے اور حالیہ چند دنوں میں دہشت گردی کے واقعات دوبارہ سے شروع ہوگئے ہیں۔

گذشتہ روز بھی خیبرپختونخوا کے ضلع کرم کی تحصیل لوئر کرم کے علاقے پارا چنار میں نامعلوم افراد نے مسافر گاڑی پر فائرنگ کی تھی جس سے خاتون سمیت پانچ افراد جاں بحق جب کہ تین افراد شدید زخمی ہو گئے تھے۔

نامعلوم افراد نے پارا چنار سے پشاور جانے والی ایک کار اور ایک فلائنگ کوچ کو نشانہ بنایا تھا، مسافر گاڑی پارا چنار سے کوہاٹ جارہی تھی۔

یہ بھی بتایا گیا کہ پاراچنار میں مسافر بس پر فائرنگ کا یہ پہلا واقعہ نہیں ہے، گذشتہ ہفتے 30 دسمبر 2023 کو بھی پارا چنار کے قریب صدہ بازار میں پشاور جانے والی وین پر ملزمان نے حملہ کیا تھا جس کے نتیجے میں ایک مسافر زخمی ہو گیا تھا، جب کہ اسی طرح ہنگو کے قریب پاراچنار جانے والی بس پر فائرنگ کے واقعے میں دو افراد جاں بحق اور چار زخمی ہوگئے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں