پاکستان تحریک انصاف 'بلے' کے انتخابی نشان سے محروم

سپریم کورٹ نے پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف الیکشن کمیشن کا موقف درست مان لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سپریم کورٹ نے پاکستان تحریک انصاف کو بلے کا انتخابی نشان واپس کرنے کے پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف الیکشن کمیشن کی جانب سے دائر درخواست پر فیصلہ سناتے ہوئے پی ٹی آئی کو انتخابی نشان سے محروم کر دیا۔

اسلام آباد میں ہفتے کے روز رات گئے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے خود فیصلہ سنایا۔ سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ نے متفقہ فیصلہ سناتے ہوئے پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا۔

چیف جسٹس قاضی فائز عیسی کی زیر سربراہی جسٹس محمد علی مظہر، جسٹس مسرت ہلالی پر مشتمل 3 رکنی بینچ نے فیصلے میں پشاورہائی کورٹ کی دلیل مسترد کردی ہے کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان کادائرہ اختیار نہیں بنتا۔

عدالت کے مطابق تفصیلی فیصلہ بعد میں جاری کیا جائے گا۔ اس سے قبل دن کے دوران سماعت فیصلہ محفوظ کر لیا گیا تھا جسے رات گئے سنایا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں