اسلام عورت کو خلع کا حق دیتا ہے: سپریم کورٹ آف پاکستان کا فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سپریم کورٹ آف پاکستان نے امریکہ میں شادی کرنے اور پاکستان میں خلع لینے کے خلاف کیس کی سماعت کرتے ہوئے ریمارکس دیے ہیں کہ اگر میاں بیوی میں ہم آہنگی اور خوشی نہ ہو تو اسلام انہیں علیحدگی کی اجازت دیتا ہے۔

سپریم کورٹ نے خلع کے خلاف پاکستانی شہری کی اپیل خارج کرنے کا تحریری حکم نامہ جاری کر دیا، امریکہ میں شادی اور پھر خلع لینے سے متعلق کیس کا 7 صحفات پر مشتمل فیصلہ جسٹس حسن اظہر رضوی نے تحریر کیا ہے۔

سپریم کورٹ نے اپنے تحریری حکم نامے میں کہا کہ درخواست گزار نے امریکہ میں ہونے والے نکاح کی پاکستان میں منسوخی چیلنج کی، ثمرینا رشید میمن امریکہ کے ساتھ ساتھ پاکستانی شہریت بھی رکھتی ہیں۔

سپریم کورٹ نے کہا کہ خلع کے باوجود غیر ضروری طور پر سابق اہلیہ کو قانونی چارہ جوئی میں گھسیٹا گیا، ریکارڈ کے مطابق خلع لینے کے بعد خاتون نے امریکہ میں دوسری شادی کرلی، درخواست گزار نے بھی پاکستان میں دوسری شادی کرنے کی کوششں کی۔

حکم نامے میں کہا گیا کہ سندھ ہائی کورٹ کا فیصلہ قانون کے مطابق ہے، جسٹس محمد علی مظہر پر مشتمل تین رکنی بنچ نے فیصلہ سنایا تھا، درخواست گزار سہیل احمد نے سندھ ہائی کورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کیا تھا۔

سپریم کورٹ نے اپنے تحریری حکم نامے میں قرار دیا کہ میاں بیوی میں ہم آہنگی اور خوشی نہ ہو تو اسلام انہیں علاحدگی کی اجازت دیتا ہے، اسلام عورت کو خلع کا حق دیتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں