پاکستانی آرمی چیف، ایرانی وزیر خارجہ ملاقات

’بہتر رابطے اور خفیہ معلومات کے تبادلے پر زور‘

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ایرانی وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان کی آرمی چیف جنرل عاصم منیر سے ملاقات ہوئی جہاں پاک-ایران دو طرفہ باہمی تعلقات کو فروغ دینے پر زور دیا گیا ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق جنرل ہیڈ کوارٹرز راولپنڈی میں ہونے والی ملاقات میں تعلقات کو مزید مضبوط کرنے اور ساتھ ہی ایک دوسرے کی تشویش کو سمجھنے کی ضرورت پر اتفاق کیا گیا۔

اس موقع پر آرمی چیف جنرل عاصم منیر کا کہنا تھا کہ خودمختاری اور جغرافیائی سرحدوں کا احترام کیا جانا چاہیے۔

دونوں جانب سے اس بات پر بھی اتفاق کیا گیا کہ دہشت گردی دونوں ممالک کے لیے مشترکہ خطرہ ہے۔

آئی ایس پی آر کے بیان میں کہا گیا کہ پاکستان اور ایران کے درمیان تاریخی، مذہبی اور ثقافتی تعلقات کا ادراک کرتے ہوئے فریقین نے دوطرفہ تعلقات کو مضبوط بنانے اور ایک دوسرے کے خدشات کی زیادہ سے زیادہ تفہیم کے فروغ دینے پر زور دیا۔

آرمی چیف نے دوسرے ملک کی خودمختاری اور علاقائی سالمیت کا احترام کرنے پر زور دیتے ہوئے اسے مقدس، مداخلت سے مبرا اور ریاست کے ساتھ تعلقات کا سب سے اہم جزو قرار دیا۔

بیان کے مطابق فریقین نے کہا کہ دہشت گردی مشترکہ خطرہ ہے جس سے مشترکہ کوششوں، بہتر رابطے اور خفیہ معلومات کے تبادلے کے ذریعے نمٹنے کی ضرورت ہے۔

آرمی چیف نے سلامتی کے خدشات کو دور کرنے کے لیے مستقل رابطے اور دستیاب مواصلاتی ذرائع کو استعمال کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

’فریقین نے مشترکہ خطرات کے خلاف ردعمل کی ہم آہنگی اور کارکردگی کو بہتر بنانے کے لیے ایک دوسرے کے ملک میں فوجی رابطہ افسروں کی تعیناتی کے طریقہ کار کو جلد از جلد عملی شکل دینے پر اتفاق کیا۔‘

بیان میں مزید کہا گیا: ’فریقین نے قریبی رابطے میں رہنے کے عزم کا اعادہ کیا اور کہا کہ کسی کو بھی دو برادر ملکوں کے درمیان اختلافات پیدا نہیں کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

’فریقین کا کہنا تھا کہ پاکستان اور ایران برادر ہمسایہ ممالک ہیں اور دونوں کی قسمت ایک دوسرے ساتھ وابستہ ہے۔

’فریقین نے سرحدی علاقے میں امن، استحکام اور خوشحالی کے لیے اپنے عزم کا اعادہ کیا جسے دونوں اطراف کے لوگوں کی فلاح و بہبود کی خاطر ناگزیر ضرورت کے طور پر شناخت کیا گیا تھا۔

اس سے قبل مہمان وزیر خارجہ نے آج اسلام آباد میں اپنے پاکستانی ہم منصب جلیل عباس جیلانی سے ملاقات کے بعد ایک مشترکہ نیوز کانفرنس کی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں