پاکستان کی علاقائی خودمختاری کی خلاف ورزی کا بھرپور جواب دیں گے: آرمی چیف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

افواج پاکستان کے چیف آف آرمی سٹاف جنرل عاصم منیر نے لائن آف کنٹرول کے دورے کے موقع پر کہا کہ کسی بھی جارحیت یا پاکستان کی علاقائی خودمختاری کی خلاف ورزی کا بھرپور قومی عزم اور فوجی طاقت کے ساتھ جواب دیا جائے گا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ [آئی ایس پی آر] کی جانب سے جاری ایک پریس ریلیز کے مطابق پاکستان کے چیف آف آرمی سٹاف جنرل عاصم منیر نے نگران وزیر اعظم پاکستان اور پاکستان کے زیر انتظام جموں و کشمیر کے وزیر اعظم کے ہمراہ مظفر آباد کا دورہ کیا۔

بعد ازاں آرمی چیف نے ساریان سیکٹر میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے ساتھ اگلے مورچوں پر تعینات فوجیوں سے ملاقات کی۔

بیان کے مطابق جموں و کشمیر یادگار مظفر آباد پہنچنے پر نگران وزیر اعظم، وزیر اعظم جموں و کشمیر اور آرمی چیف نے یادگار شہدا پر پھولوں کی چادر چڑھائی اور شہدا کی عظیم قربانیوں کو خراج عقیدت پیش کیا۔

اس موقع پر جنرل عاصم نے پاکستان میں ہندوستانی ریاست کی سرپرستی میں دہشت گردی کا بھی تذکرہ کیا جس نے اب پاکستان میں شہریوں کو نشانہ بنایا۔

آرمی چیف کا کہنا تھا کہ بین الاقوامی قانون کے اصولوں کی اس طرح کی بے حسی ایک معمول کی بات بنتی جا رہی ہے۔ پاکستان ایسی تمام کوششوں کو بے نقاب کرتا رہے گا اور اپنے شہریوں کی حفاظت کو یقینی بنائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں