چمن میں جے یو آئی رہنما حافظ حمداللہ کی گاڑی پر فائرنگ کی اطلاع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

جمعیت علما اسلام کے سینیئر رہنما حافظ حمداللہ کی گاڑی پر چمن میں فائرنگ ہوئی ہے۔

پولیس نے بتایا ہے کہ حافظ حمداللہ چمن سے کوئٹہ جا رہے تھے جہاں میزائی اڈا پر ان کی گاڑی کو نشانہ بنایا گیا ہے تاہم وہ محفوظ رہے۔

واضح رہے کہ حافظ حمداللہ کو اس سے قبل بھی دہشتگردوں کی جانب سے نشانہ بنایا گیا تھا جس کے نتیجے میں وہ زخمی ہو گئے تھے۔

دوسری جانب آج ہی بلوچستان کے علاقے قلعہ سیف اللہ میں جے یو آئی امیدوار اسمبلی کے دفتر کے باہر دھماکہ ہوا ہے جس کے نتیجے میں 12 افراد جاں بحق ہو گئے۔

یہ بھی یاد رہے کہ عام انتخابات کا شیڈول جاری ہوتے ہی سکیورٹی اداروں کی جانب سے مولانا فضل الرحمان سمیت اہم اداروں کو تھریٹ الرٹ جاری کیے گئے تھے۔

بعد ازاں ڈیرہ اسماعیل خان میں الیکشن مہم کے دوران مولانا فضل الرحمان کے قافلے کو نشانہ بنایا گیا تھا۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا تھا کہ ہم سکیورٹی خدشات کے باعث الیکشن مہم نہیں چلا پا رہے، ایسی صورت میں انتخابات اگر کچھ وقت لیے مؤخر بھی ہو جائیں تو کوئی مضائقہ نہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں