پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ نو منتخب آزاد ارکان کا سنی اتحاد کونسل میں شمولیت کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

تحریکِ انصاف نے اعلان کیا ہے کہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد ارکان سنی اتحاد کونسل میں شامل ہوں گے۔

اسلام آباد میں سنی اتحاد کونسل اور مجلس وحدت المسلمین کے رہنماؤں کے ساتھ مشترکہ نیوز کانفرنس کرتے ہوئے بیرسٹر گوہر کا کہنا تھا کہ ہم قومی اسمبلی کی 180 نشستوں پر کامیاب ہو چکے ہیں، الیکشن میں ملک بھرسے پی ٹی آئی کے امیدوار کامیاب ہوئے ہیں، ہمارے تمام امیدواروں کے کاغذات نامزدگی میں پارٹی پی ٹی آئی لکھا تھا، ہمارےامیدواروں کو پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ کہا جاتا ہے۔

بیرسٹر گوہر نے بتایا کہ قومی اسمبلی، پنجاب اور خیبر پختونخوا کی اسمبلیوں میں ہمارے امیدوار سنی اتحاد میں شمولیت اختیار کریں گے، ہمارا اتحاد اس ملک کے لیے ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن میںخصوصی نشستوں کے لیے درخواست کریں گے،الیکشن کمیشن میں آج امیدواروں کی پارٹی میں شمولیت کے دستاویز جمع کروادیں گے۔

اُن کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی الیکشن کمیشن کو خط لکھے گی جس میں درخواست کی جائے گی کہ خواتین اور اقلیتوں کی مخصوص نشستوں کے لیے کوٹہ فراہم کیا جائے۔

بیرسٹر گوہر علی خان نے ایک بار پھر دعویٰ کیا کہ پی ٹی آئی کو قومی اسمبلی کی 180 نشستیں ملی ہیں۔

پی ٹی آئی کے رہنما اور وزیرِ اعظم کے امیدوار عمر ایوب خان کا کہنا تھا کہ ہم ملک میں اتحاد چاہتے ہیں۔ سنی اتحاد کونسل میں شامل ہونے کا مقصد مخصوص نشستوں کا حصول ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ایم کیو ایم نے کراچی میں ہمارے منڈیٹ پر ڈاکا ڈالا ہے۔

انہوں نے ایک بارپھر دعویٰ کیا کہ پی ٹی آئی وفاق میں حکومت بنائے گی۔ حکومت بنانے کے بعد عمران خان اور گرفتار رہنماؤں کی رہائی ممکن بنائیں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں