امارات کے لیے پاکستانی فوڈ آئٹمز کی برآمدات میں چالیس فیصد اضافہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات میں پاکستان کے سفارتکار دیکھ رہے ہیں کہ امارات کے لیے پاکستان کی فوڈ آئٹمز سے متعلق برآمدات میں چالیس فیصد اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے۔ اس امر کا اظہار امارات میں جاری نمائش میں پاکستان کی پویلین کا افتتاح کرتے ہوئے کیا گیا ہے۔

دبئی میں امارات میں خوراک سے متعلق اشیاء کے بارے میں پانچ روزہ نمائش کا افتتاح کیا گیا ہے۔ یہ نمائش خوراک سے متعلق دنیا کی سب سے بڑی نمائش ہے۔ یہ نمائش سالانہ بنیادوں پر لگائی جاتی ہے۔ نمائش میں رنگا رنگ قسم کی اشیائے خورد و نوش سجائی جاتی ہیں۔ اور مختلف کاروباری کمپنیاں اپنے سٹال لگاتی ہیں۔

پاکستان کی طرف سے بھی اس میں ایک خصوصی پویلین کا افتتاح کیا گیا ہے۔ مختلف ملکوں کی فوڈ انڈسٹری اس نمائش مین اپنے مصنوعات کو لاتی ہے۔ پاکستان نے بھی اس کے لیے خصوصی پویلین قائم کیا ہے۔ یہ پویلین ورلد ٹرید سنٹر میں قائم کیا گیا ہے

متحدہ عرب امارات میں پاکستان کے ایلچی، سفیر فیصل نیاز ترمذی (درمیان میں)، 20 فروری، 2024 کو دبئی، متحدہ عرب امارات میں ورلڈ ٹریڈ سینٹر میں گلفوڈ نمائش میں اپنے ملک کے پویلین کے افتتاح کے موقع پر تصویر کھینچ رہے ہیں۔
متحدہ عرب امارات میں پاکستان کے ایلچی، سفیر فیصل نیاز ترمذی (درمیان میں)، 20 فروری، 2024 کو دبئی، متحدہ عرب امارات میں ورلڈ ٹریڈ سینٹر میں گلفوڈ نمائش میں اپنے ملک کے پویلین کے افتتاح کے موقع پر تصویر کھینچ رہے ہیں۔

امارات کے لیے پاکستان کے سفیر فیصل نیاز ترمذی نے اس موقع پر بات کرتے ہوئے کہا ' یہ بڑے فخر کا لمحہ ہے کہ پاکستان سے اس نمائش کے لیے نئی آئٹمز متعارف کرا رہے ہیں۔ ' خیال رہے اس نمائش میں 100 کے قریب پاکستانی فود انٹرپرائزز نے اپنی فوڈ آئٹمز کو نمائش کے لیے منتخب کیا ہے۔ سفیر پاکستان نے کہا یہ ہماری فوڈ کمپنیوں کے لیے بڑی حوصلہ افزائی کی بات ہے۔ امید ہے کہ پاکستان کی اس سلسلے میں برآمدات میں چالیس فیصد اضافہ ہو سکے گا۔ خصوصاً گوشت کی برآمدات کے سلسلے میں اضافہ ہوا ہے۔ اسی طرح پاکستان کی دودھ اور مکھن سے متعلق مصنوعات کی برآمد میں بھی اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے۔ '

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں