محمد اورنگزیب کی وزیرخزانہ تعیناتی مثبت اقدام ہے، بلوم برگ

شوکت عزیز اور شوکت ترین کے بعد محمد اورنگزیب وزیر خزانہ کے عہدے پر فائز ہونے والے تیسرے بینکر ہیں۔

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

معروف امریکی جریدے بلومبرگ کا کہنا ہے کہ جے پی مارگن کے سابق بینکر محمد اورنگزیب کی بطور وزیرِ خزانہ تعیناتی پاکستان کے لیے مثبت فیصلہ ہے، سرمایہ کاروں کی دلچسپی پاکستان کے نئے وزیرِ خزانہ کی تعیناتی میں تھی۔

اپنی ایک رپورٹ میں بلومبرگ نے کہا ہے کہ مزید کہا کہ ان کی تقرری سے ظاہر ہوتا ہے کہ وزیر اعظم شہباز شریف ٹیکنوکریٹس کے ذریعے ملکی معیشت کو ٹھیک کرنا چاہتے ہیں۔ امریکی جریدے بلوم برگ نے رپورٹ میں کہا کہ محمد اورنگزیب کو وزارت خزانہ کے لیے دیگر امیداروں اسحق ڈار اور شمشاد اختر پر ترجیح دی گئی ہے۔

واضح رہے کہ شوکت عزیز اور شوکت ترین کے بعد محمد اورنگزیب وزیر خزانہ کے عہدے پر فائز ہونے والے تیسرے بینکر ہیں۔

اندریں حالات اقتصادی ماہرین کی رائے میں آئی ایم ایف سے مذاکرات میں وزیرِ خزانہ کا کردار کلیدی ہو گا، آئی ایم ایف کے نئے پروگرام سے پہلے محمد اورنگزیب کی تعیناتی مثبت اقدام ہے، ٹیکنوکریٹ کی بطور وزیرِ خزانہ تعیناتی پاکستان کو درپیش چیلنجز کو حل کرنے میں مدد گار ہو گی، محمد اورنگزیب اصلاحات لانے کے لیے وہ سب کچھ کریں گے جو ضروری ہوگا، ان کا ماضی بتاتا ہے وہ ٹیکس کی بنیاد وسیع کرنے کے لیے ریئل اسٹیٹ اور ریٹیلرز پر ٹیکس عائد کرنا چاہتے ہیں۔

ادھر محمد اورنگزیب نے وزیر خزانہ کی ذمہ داریاں سنبھال لی ہیں، حلف اٹھانے کے بعد محمد اورنگزیب وزارت خزانہ پہنچے جہاں سیکرٹری خزانہ و دیگر اعلیٰ حکام نے ان ک ااستقبال کیا، وفاقی وزیر کا وزارت کے افسران سے تعارف کرایا گیا اور امور پر بریفنگ دی گئی۔

اپنے ایک بیان میں وفاقی وزیر خزانہ محمد اورنگزیب نے کہا ہے کہ رواں مالی سال مشکل برس ہوگا، ہاکستان بین الاقوامی مالیاتی فنڈ سے اہم مذاکرات کے لیے باضابطہ درخواست بھیجے گا کیوں کہ یہ ملکی معیشت کے لیے انتہائی اہم ہے اور اب محض مذاکرات کا وقت نہیں بلکہ عملی اقدامات کا وقت ہے۔

بتایا جارہا ہے کہ وزیر خزانہ محمد اورنگزیب 15سے20 اپریل تک امریکہ کا دورہ کریں گے، اس دوران وزیر خزانہ واشنگٹن میں آئی ایم ایف، ورلڈ بینک کے سالانہ وزارتی اجلاس میں شرکت کریں گے، 17 سے 19 اپریل تک شیڈول اجلاس میں محمد اورنگزیب پاکستانی وفد کی قیادت کریں گے، گورنر سٹیٹ بینک، چیئرمین ایف بی آر اور معاشی ٹیم بھی وزیرخزانہ کے ہمراہ ہوگی، دورے میں وزیر خزانہ کی دیگر ممالک کے وزرائے خزانہ سے ملاقاتیں بھی متوقع ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں