اسرائیل کی حمایت کی پاداش میں مردان ’کے ایف سی‘ کی زبردستی تالا بندی

عوامی نیشنل پارٹی کے حمایت اللہ کی سربراہی میں مظاہرین افطار کے بعد کے ایف سی کی مقامی فرنچائز پر پہنچے اور اس کے دروازے کو زنجیریں ڈال کر بند کر دیا۔

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

خیبر پختونخوا کے ضلع مردان میں ناظم کی سربراہی میں جمعرات کو عالمی فاسٹ فوڈ برانڈ کے ایف سی کی فرنچائز کو اسرائیل کی حمایت کے الزام میں زبردستی بند کر دیا گیا۔

مردان کی ضلعی کونسل کے جمعرات کے روز ہونے والے ایک اجلاس میں ناظم حمایت اللہ مایار نے کے ایف سی مردان کو بند کرنے کے لیے قرار داد پیش کی جسے متفقہ طور پر منظور کر لیا گیا۔

قرار داد منظور ہونے کے بعد عوامی نیشنل پارٹی سے وابستہ میئر حمایت اللہ کی سربراہی میں مظاہرین افطار کے بعد کے ایف سی کی مقامی فرنچائز پر پہنچے اور اس کے دروازے کو زنجیریں ڈال کر بند کر دیا۔

حمایت اللہ نے اس موقع پر میڈیا سے گفتگو میں کہا: ’ہم نے علامتی طور پر کے ایف سی کے دروازوں کو زنجریں لگا کر بند کر دیا۔‘

ان کے مطابق: ’ضلعی انتظامیہ یا کے ایف سی انتظامیہ اگر کھولنا چاہے تو ان کی مرضی ہے، لیکن آج کے ایف سی کو بند کرنے کا مقصد عوام میں اسرائیلی مظالم کے بارے میں آگاہی تھی۔‘

انہوں نے کہا کہ وہ کسی کے کاروبار کو بند کرنے کے حق میں نہیں لیکن ’ہم عوام میں آگاہی پھیلانا چاہتے ہیں تاکہ وہ اسرائیلی مصنوعات کی بایئکاٹ کا اعلان کریں۔‘

افطاری کے بعد وہ مظاہرین سمیت موقعے پر پہنچے اور کے ایف سی کو بند کر دیا۔ گذشتہ ہفتے جماعت اسلامی نے کے ایف سی مردان کی عمارت کے باہر مظاہرہ کرتے ہوئے اسے بند کرنے کا الٹی میٹم دیا تھا۔

جماعت اسلامی نے کے ایف سی پر اسرائیل کے حمایت یافتہ برانڈ ہونے کا الزام لگایا تھا۔

کے ایف سی مردان کی انتظامیہ کے ایک رکن نے نام نہ ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا کہ مظاہرین نے آج ہماری برانچ کو بند کر دیا۔

ان سے جب برانچ کو دوبارہ کھولنے کے حوالے سے پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ ابھی کوئی فیصلہ نہیں ہوا۔

کے ایف سی کی بنیاد امریکہ کے کرنل ہارلینڈ سینڈرز نے رکھی تھی، جن کی یونیورسٹی آف ہیوسٹن کے مطابق امریکہ میں پانچ ہزار سے زائد جبکہ پوری دنیا کے 145 ممالک میں 25 ہزار سے زائد شاخیں ہیں۔

پاکستان میں کے ایف سی نے 1997 میں قدم رکھا اور آج ملک کے 37 شہروں میں اس کی 128 شاخیں موجود ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں