بشام میں گاڑی پر مبینہ خودکش حملے میں پانچ چینیوں سمیت چھ افراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

صوبہ خیبرپختونخوا کے علاقہ شانگلہ میں بشام کے مقام پر گاڑی پر حملے میں پانچ چینی باشندے ہلاک ہو گئے۔ مسافر گاڑی اسلام آباد سے کوہستان جا رہی تھی۔

خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق شانگلہ میں بشام کے مقام پر ایک گاڑی پر حملہ کیا گیا ہے جہاں سامنے سے آنے والی موٹر کار چینی باشندوں کی گاڑی سے ٹکرا گئی، موٹر کار ٹکرانے کے بعد دھماکہ ہوا، جس کے نتیجے میں پانچ چینی باشندے ہلاک ہوئے۔

ادھر ڈی آئی جی مالاکنڈ محمد علی گنڈاپور نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ چینی انجینئرز کا ایک قافلہ اسلام آباد سے داسو میں اپنے کیمپ کی طرف جا رہا تھا کہ اس دوران ایک خودکش بمبار نے بارود سے بھری گاڑی ان کے قافلے سے ٹکرا دی، خودکش حملے میں پانچ چینی باشندے ہلاک اور اُن کا ایک پاکستانی ڈرائیور بھی جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔

اطلاعات کے مطابق چینی باشندوں کی گاڑی بشام سے نکلی تھی کہ راستے میں دوپہر کو تقریباً ڈیڑھ بجے کے قریب یہ حملہ ہوا، حملے میں چینی مسافروں کی گاڑی کا ڈرائیور بھی زخمی ہوا ہے جسے دیگر زخمیوں کے ساتھ ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔

واقعے کے حوالے سے سرکاری حکام کا کہنا ہے کہ ابھی فوری طور پر اس بات کا اندازہ نہیں لگایا جا سکا کہ یہ دھماکہ خودکش تھا یا ریموٹ کنٹرول ڈیوائس کے ذریعے سے بارودی مواد کا استعمال کرتے ہوئے گاڑی کو نشانہ بنایا گیا۔

بتایا جارہا ہے کہ چینی انجینئرز کے ساتھ دہشت گردی کا واقعہ پیش آنے کے بعد علاقے کو قانون نافذ کرنے والے اداروں نے گھیرے میں لے لیا، بم ڈسپوزل اسکواڈ بھی جائے وقوعہ پر پہنچ گیا جس کی جانب سے دھماکے کی نوعیت جاننے کی کوششیں جاری ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں