تربت میں پاک بحریہ کے اڈے پر ناکام حملے میں چاروں عسکریت پسند ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستانی فوج نے کہا کہ پیر اور منگل کی درمیان شب عسکریت پسندوں نے تربت میں پاکستانی بحریہ کے اڈے پر حملے کی کوشش کی جسے مؤثر جوابی کارروائی سے ناکام بنا دیا گیا۔

ضلع کیچ میں حکام کے حوالے سے میڈیا پر نشر ہونے والی اطلاعات کے مطابق ایئرپورٹ پر نامعلوم افراد نے حملہ کرتے ہوئے اندر داخل ہونے کی کوشش کی جس پر فورسز کی جانب سے جوابی کارروائی کی گئی۔ رات گئے تک ایئرپورٹ کے اطراف میں شدید فائرنگ اور دھماکوں کی آوازیں سنائی دیتی رہیں۔

یہ ایئرپورٹ جنوب مغربی بلوچستان کے مکران ڈویژن میں واقع ضلع کیچ کے ضلعی ہیڈ کوارٹر تربت میں واقع ہے اور پاک بحریہ کا دوسرا بڑا ایئر بیس بھی اسی ایئرپورٹ کی چاردیواری کے اندر واقع ہے۔

منگل کو جاری کیے گئے پاکستان فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے بیان کے مطابق ’سکیورٹی فورسز کو بحریہ فورس کی مدد کے لیے فوری طور پر نیول بیس روانہ کیا گیا اور مشترکہ آپریشن میں چار دہشت گردوں کو ہلاک کیا گیا، جبکہ سپاہی نعمان فرید اس کارروائی میں جاں بحق ہو گئے۔‘

آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ ’پاکستان کی مسلح افواج کسی بھی قیمت پر ملک بھر سے دہشت گردی کی لعنت کو ختم کرنے لیے پرعزم ہیں۔

دریں اثنا پاکستان بحریہ کے ترجمان کی جانب سے جاری کردہ بیان میں بتایا گیا ہے کہ نیول کیمپ پر پیر اور منگل کی درمیاتی رات حملہ کرنے والے دہشت گردوں کو ہلاک کر دیا گیا ہے۔

منگل کی صبح بحریہ کے ترجمان کی جانب سے جاری کیے گئے بیان میں بتایا گیا کہ ’دہشت گردوں نے تربیت سول ایئرپورٹ کے قریب موجود نیول بیس کیمپ میں داخل ہونے کی کوشش کی جس کو ناکام بنا دیا گیا۔‘ بیان کے مطابق ’دہشت گرد بھاری اسلحے اور بارودی مواد سے لیس تھے۔‘

بیان میں یہ بھی بتایا گیا تھا کہ ’پانچ دہشت گردوں نے داخلی دروازے پر دستی بموں سے حملہ اور فائرنگ کی جس کا جوانوں نے بہادری سے مقابلہ کیا اور حملے کو ناکام بناتے ہوئے تمام حملہ آوروں کو ہلاک کر دیا گیا۔‘ترجمان کا کہنا ہے کہ ’بیس میں موجود بحریہ کے تمام اہلکار اور اثاثہ جات مکمل محفوظ ہیں۔‘

حملے کی ذمہ داری کالعدم تنظیم بلوچ لبریشن آرمی کی مجید بریگیڈ نے قبول کی ہے۔

یاد رہے 20 مارچ 2024 یعنی پانچ روز قبل بھی گوادر میں رہائشی کمپلیکس گوادر پورٹ اتھارٹی پر حملہ ہوا تھا جس میں آٹھ کے آٹھ حملہ آور مارے گئے تھے جبکہ دو سکیورٹی اہلکار بھی جان سے گئے تھے۔

دوسری جانب وزیرِ اعظم شہباز شریف نے تربت نیول ایئر بیس پر دہشت گرد حملہ ناکام بنانے پر سکیورٹی فورسز کو خراج تحسین پیش کیا ہے۔

اپنے بیان میں شہبازشریف نے کہا کہ سکیورٹی فورسز کی بروقت مؤثر کارروائی سے دہشت گرد جہنم واصل ہوئے اور ہم ایک بڑے نقصان سے بچ گئے، ہم دہشت گردی کی عفریت کو کچلنے کیلئے پر عزم ہیں۔

شہباز شریف کا کہنا ہے کہ پوری قوم اپنی بہادر سکیورٹی فورسز کے ساتھ کھڑی ہے اور انہیں سلام پیش کرتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں