مزدور سے یوٹیوب سٹار بننے تک، پاکستانی کا یوٹیوب ویڈیوز کے ذریعےمال و شہرت کا حصول

30 سالہ مزدور نے یوٹیوب چینل بنایا اور تفریحی وڈیوز کے ذریعے مشہور آن لائن سٹار بن گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
5 منٹس read

34 سالہ ریاض علی اینٹوں پر اینٹیں رکھتا جاتا اور انہیں سیمنٹ، پانی اور ریت کے ایک گاڑھے خمیر (مسالہ) کی مدد سے جوڑ کر گھر اور عمارات بناتا تھا اور پاکستان کے جنوبی ضلع سانگھڑ میں کئی سالوں سے دستی مزدوری کرتا تھا۔

2022 میں اس نے توجہ حاصل کرنے والا ویڈیو مواد بنانا شروع کیا جس میں تعمیری کام میں استعمال ہونے والا مسالہ پھینکنا اور پکڑنا، موٹر سائیکل کے ٹائر سے ایک بلند کھمبے کو نشانہ بنانا اور کچھ مذاقی ویڈیوز شامل تھیں۔ اس سے یومیہ اجرت کمانے والا مزدور نہ صرف لکھ پتی بلکہ ڈیجیٹل دنیا کی ایک معروف شخصیت بھی بن گیا ہے۔

علی، ریاض جان کے نام سے زیادہ معروف ہیں۔ انہوں نے شروع میں ٹک ٹاک پر ویڈیوز پوسٹ کیں جس کے بعد ایک دوست نے انہیں یوٹیوب پر مواد پوسٹ کرنے کا مشورہ دیا۔ انہوں نے اپنا یوٹیوب چینل اپریل 2022 میں بنایا جو صرف نو ماہ بعد منیٹائز ہو گیا۔

وہ اب دو سال پہلے کے کام سے ہونے والی آمدن سے 20 گنا زیادہ کماتے ہیں۔

انہوں نے جمعرات کو عرب نیوز کو بتایا، "ایک مزدور کے طور پر میری اجرت 1,500 روپے (یومیہ) تھی۔ ایک مہینے میں میں 30,000 روپے یا 35,000 روپے (107-125 ڈالر) کماتا تھا کیونکہ یہ ایک غیر مستقل ذریعہ معاش تھا۔" نیز انہوں نے کہا، "یو ٹیوب سے میں ہر ماہ 500,000 روپے (1,795 ڈالر) سے زیادہ کما لیتا ہوں۔"

یوٹیوب پر 1.9 ملین سبسکرائبرز کے حامل علی کے ٹک ٹاک پر 439,000 اور فیس بک پر 359,000 پیروکار ہیں۔ وہ کہتے ہیں کہ ان کا مواد یوٹیوب شارٹس کے ذریعے وائرل ہوا - عمودی زاویئے سے بنی ہوئی ایسی ویڈیوز جن کا دورانیہ 60 سیکنڈ یا اس سے کم ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا، "یو ٹیوب پر میری پہلی کمائی 800,000 روپے (2,872) تھی۔ اتنی بڑی رقم میں نے پہلے کبھی نہیں دیکھی تھی۔ میں اور میرا خاندان بہت خوش تھے کہ اتنی اہم رقم میرے ہاتھ آئی۔"

انہوں نے مزید کہا، "یو ٹیوب کے بعد میری زندگی بدل گئی۔ وہ کہتے ہیں کہ جب اللہ دیتا ہے تو چھپر پھاڑ کر دیتا ہے۔"

علی جنہوں نے 2010 میں یومیہ اجرت پر کام کرنا شروع کیا تھا، ڈیجیٹل سٹار بننے کے بعد سے اپنی مزدوری کا کام چھوڑ چکے ہیں لیکن پھر بھی وہ اپنے سابقہ کام سے متعلق ویڈیوز بناتے ہیں۔

انہوں نے اپنے وائرل ویڈیوز کے یوٹیوب پر اشتراک کو بھی فعال کیا ہوا ہے جس سے کئی دوسرے تخلیق کاروں کو اپنے چینلز پر ٹریفک کے حصول میں مدد ملتی ہے۔

انہوں نے کہا، "مختلف ممالک کے لوگ اپنے چینلز پر میرے مواد اور ویڈیوز کو دوبارہ پوسٹ کرتے ہیں اور ان کے چینلز بھی منیٹائز ہو گئے ہیں۔ میں نے انہیں اجازت دے دی ہے۔"

اس کامیابی نے دو رہائشی پلاٹ اور دو بھینسیں خریدنے، اپنے بچوں کو بہتر سکولوں میں بھیجنے اور اپنے خاندان کی بہتر طریقے سے نگہداشت کرنے میں علی کی مدد کی ہے۔ 30 سالہ یوٹیوبر نے 500,000 روپے کا ایک موبائل فون بھی خریدا ہے جسے وہ معیاری ویڈیو مواد بنانے کے لیے استعمال کرتے ہیں۔

لیکن علی نے اپنی کامیابی کو اپنی ذات تک محدود نہیں رکھا اور اپنی ڈیجیٹل صلاحیتوں کو خاندان، احباب اور جو بھی سیکھنے کے لیے تیار ہو، ان تک منتقل کیا ہے۔

انہوں نے عرب نیوز کو بتایا، "میرے علاوہ میرے بھائی کا بھی ایک چینل ہے جہاں وہ مزدوری سے متعلق ویڈیوز پوسٹ کرتا ہے۔ اس کا چینل بھی منیٹائز ہو گیا ہے۔ اس کے علاوہ میرے دو بیٹے ہیں، علی آیان اور زیب زوہان جن کا چینل بھی منیٹائز ہے۔"

وہ کہتے ہیں، شروع میں نہ تو ان کے بھائی کے اور نہ ہی ان کے بیٹوں کے چینلز نے توجہ حاصل کی اس لیے انھوں نے اپنے چینل کا مواد ان کے چینلز پر پوسٹ کرنا شروع کر دیا جس سے انھیں ترقی اور رفتار حاصل کرنے میں مدد ملی۔ نتیجتاً دونوں چینلز منیٹائز ہو گئے۔

30 سالہ یوٹیوبر سانگھڑ میں اپنے آبائی شہر جھول میں نوجوانوں کو مفت، غیر رسمی مشاورتی خدمات پیش کرتے ہیں جو اپنے یوٹیوب چینلز قائم کرنے میں دلچسپی رکھتے ہوں۔ وہ کہتے ہیں کہ ان کے پاس تقریباً 50 سے 60 نوجوان ہیں جن کے پاس یا تو کمائی کرنے والے چینل ہیں یا وہ ان کے لیے سرگرمِ عمل ہیں۔

انہوں نے کہا، "میں ان سب کی رہنمائی کرتا ہوں اور وہ میری ہدایات پر عمل کرتے ہیںَ۔"

ایک کسان اور علی کے دوست علی رضا اپنے دوست کو یوٹیوب کے ذریعے پیسے کماتے دیکھ کر متأثر ہوئے۔ رضا نے ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ پر اپنا اکاؤنٹ بنایا جہاں وہ مزاحیہ ویڈیوز پوسٹ کرتے ہیں۔

علی رضا نے عرب نیوز کو بتایا، "چونکہ ریاض جان دوسروں کو سکھا رہے ہیں تو میں بھی ان کے گروپ میں شامل ہو گیا۔ میرے یوٹیوب چینل کو منیٹائز ہوئے چار ماہ ہو چکے ہیں۔ میں ہر ماہ 25,000 سے 30,000 روپے (89-107 ڈالر) کے درمیان کماتا ہوں۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں