پاکستانی عازمین حج کو حج کے لیے روانگی سے پانچ دن قبل خصوصی ویکسینیشن کرانے کی ہدایت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستانی عازمین حج کو حج پر روانگی سے پہلے ویکسینیشن کرانی ہوگی۔ یہ ویکسینیشن پولیو ، موسمی نزلہ بخار سے بچنے کے ساتھ ساتھ گردن توڑ بخار کے لیے بھی ویکسینیشن کرانے کی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں۔ عازمین حج کی یہ ویکسینیشن اپنے حاجی کیمپوں میں ہوگی۔ جو تمام بڑے شہروں میں قائم ہیں۔

پاکستان کی وزارت مذہبی امور نے ہفتے کے روز ملک بھر سے تعلق رکھنے والے عازمین حج کو ہدایات جاری کی ہیں کہ وہ روانگی کے شیڈول سے پہلے پہلے اپنی ویکسینیشن کو مکمل کریں۔ تاکہ انہیں سعودی عرب میں کسی قسم کی مشکل کا سامنا نہ کرنا پڑے اور انہیں اپنی صحت سے متعلق کسی مسئلے سے بھی دوچار نہ ہونا پڑے۔ وزارت مذہبی امور کے مطابق ویکسینیشن کا عمل 4 مئی سے شروع ہو گیا ہے۔ جو اپنے اپنے شیڈول کے مطابق عازمین حج کرواتے رہیں گے۔

وزارت مذہبی امور کی ہدایت کے مطابق تمام عازمین حج کے لیے یہ ویکسینیشن ضروری ہے تاکہ وہ ادائیگی حج کے لیے پوری دنیا سے آئے ہوئے لاکھوں فرزندان توحید کے اجتماع میں مناسک حج پوری صحت اور درستگی کے ساتھ انجام دے سکیں۔

خیال رہے ہر سال دنیا بھر کے صاحب استطاعت مسلمانوں میں سے ایک مخصوص تعداد کا قرعہ اندازی یا دوسری سکیموں کے تحت حج کے لیے جانے کا فیصلہ کیا جاتا ہے۔ اس مخصوص تعداد کا تعین سعودی وزارت حج کی طرف سے طے شدہ کوٹے کے مطابق ہوتا ہے کہ ہر سال کس ملک سے کتنی بڑی تعداد میں حج کے لیے سعودی عرب پہنچنا ہے۔

سعودی وزارت حج کے مطابق اتنے بڑے انسانی اجتماع کے دوران جہاں ہر نسل ، رنگ اور ملک کے لوگ جمع ہوتے ہیں کا حصہ بننے کے لیے ضروری ہے کہ حفظان صحت کے اصولوں کا بھی خیال رکھا جائے اور طبی اصولوں کے مطابق ویکسینیشن کا بھی اہتمام کیا جائے۔

یہ احتیاطی تدابیر اور اہتمام دنیا بھر سے آئے لاکھوں عازمین حج میں بیماریوں کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ضروری ہے۔

سرکاری خبر رساں ادارے 'ایسوسی ایٹڈ پریس' نے کہا ہے کہ عازمین حج کے لیے ضروری ہے کہ ییلو کارڈ کے ساتھ ساتھ گردن توڑ بخار، موسمی نزلہ اور پولیو ویکسینیشن اپنے اپنے حاجی کیمپ سے ضرور حاصل کریں۔ خیال رہے پاکستانی عازمین حج کے لیے فلائٹس 9 مئی سے شروع ہوں گی اور 10 جون تک جاری رہیں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں