تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
سعودی خواتین نے عید کی خوشیاں حجاج کی خدمت کے لیے قربان کر دیں
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

بدھ 18 محرم 1441هـ - 18 ستمبر 2019م
آخری اشاعت: پیر 10 ذوالحجہ 1440هـ - 12 اگست 2019م KSA 14:23 - GMT 11:23
سعودی خواتین نے عید کی خوشیاں حجاج کی خدمت کے لیے قربان کر دیں
العربیہ ڈاٹ نیٹ ۔ نادیہ الفواز

سعودی عرب کا بچہ بچہ حجاج کرام کی خدمت کے ایمانی جذبے سے سرشار ہے۔ مردوں کی طرح خواتین بھی کئی شعبوں میں حجاج کرام کی خدمت میں دن رات مصروف رہتی ہیں۔ سرکاری محکموں میں کام کرنے والی خواتین کی طرح بڑی تعداد میں رضا کار خواتین بھی حجاج کرام کی معاونت، مدد اور خدمت کرنے میں پیش پیش ہیں۔ ان میں بعض خواتین سماجی شعبے میں حجاج کرام کی مدد کرتی ہیں۔ بعض طبی میدان اور بعض دوسرے شعبوں میں کام کر رہی ہیں۔

مکہ معظمہ کی خواتین حجاج کرام کی خدت میں پیش پیش رہتی ہیں۔ رضاکار خواتین اپنی سہیلیوں کو بھی اس عظیم مشن اور خدمت میں شامل کرتے ہوئے اللہ کے مہمانوں کی خدمت میں سرگرم دکھائی دیتی ہیں۔

شاہ فیصل یونیورسٹی میں طب وجراحت کے شعبے کی طالبہ اور رضاکار مریم عبدالمحسن الزوید نے حجاج کرام کی خدمت کے اپنے تجربے کے بارے میں آگاہ کیا۔ اس کا کہنا ہے کہ میں نے اپنے آپ اور اپنے پروردگار سے یہ عہد کر رکھا ہے کہ میں مسلم امہ، اپنے ملک، شاہی نظام کی پوری دیانت داری اور اخلاص کے ساتھ خدمت کروں گی۔ میں لوگوں کی زندگیاں اسان بنانے کے لیے ہر ممکن کوششیں اور وسائل بروئے کار لائوں گی۔ جب مجھے یہ پیغام ملا کہ حکومت کو حجاج کرام کے لیے رضاکاروں کی ضرورت ہے تو میں نے اپنے آپ سے کہا کہ مریم تمہیں بھی حجاج کرام کی رضاکارنہ خدمت اور طبی معاونت کرنے والوں میں اپنا نام رجسٹرڈ کرانا ہو گا'۔

مریم نے مزید کہا کہ ہم سب رضاکار یہ جانتی ہیں کہ حجاج کرام کی خدمت کوئی آسان کام نہیں۔ خاص طورپر موجودہ گرم موسم میں حجاج کی خدمت ایک بڑی آزمائش ہے مگر ہم نے یہ تہیا کررکھا تھا کہ ہمیں حجاج ہرصورت میں حجاج کرام کی خدمت کرنا ہے۔