تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
لیبیا : ترکی کی مداخلت کے خلاف بنغازی میں مظاہرے
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

بدھ 19 ذوالحجہ 1440هـ - 21 اگست 2019م
آخری اشاعت: پیر 12 ذیعقدہ 1440هـ - 15 جولائی 2019م KSA 14:36 - GMT 11:36
لیبیا : ترکی کی مداخلت کے خلاف بنغازی میں مظاہرے
دبئی – العربیہ ڈاٹ نیٹ

لیبیا کے شہر بنغازی میں سیکڑوں افراد نے مظاہروں میں حصہ لیا۔ مظاہروں کے شرکاء لیبیا کے معاملے میں ترکی کی کھلی مداخلت پر احتجاج کر رہے تھے۔

مظاہرین نے ترکی سے مطالبہ کیا کہ وہ وفاق کی حکومت کو اسلحے کی فراہمی روک دے جو طرابلس پر مسلح ملیشیاؤں کے کنٹرول کو سپورٹ کر رہی ہے۔

مظاہرین نے لیبیا کی قومی فوج کی حمایت میں بینرز اٹھا رکھے تھے جن میں باور کرایا گیا تھا کہ وہ طرابلس میں مسلح ملیشیاؤں کے خلاف معرکے میں فوج کے سربراہ خلیفہ حفتر کے ساتھ کھڑے ہیں۔

دوسری جانب باخبر ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ قاہرہ میں لیبیا کے ارکان پارلیمنٹ کے اجلاس میں کئی تجاویز پیش کی گئیں۔ ان میں لیبیا میں قومی وفاق کی ایک حکومت تشکیل دینا اور عسکری ادارے کے کام کو مکمل طور پر یکجا کر دینا شامل ہے۔

ذرائع نے واضح کیا کہ لیبیا کے ایک نئے آئین کو وضع کرنے کا کام شروع کرنے کی ذمے داری اٹھانے کے واسطے ایک کمیٹی قائم کرنے کے امکان پر غور ہو سکتا ہے۔

مصری پارلیمنٹ نے لیبیا کے ارکان پارلیمنٹ کے وفد کا استقبال کیا۔ اس موقع پر پارلیمنٹ کے اسپیکر ڈاکٹر علی عبدالعال نے زور دے کر کہا کہ لیبیا کا امن درحقیقت مصر کا امن ہے۔ انہوں نے باور کرایا کہ قاہرہ کسی بھی ملک کو لیبیا کے امن و امان کے ساتھ کھیلنے کی اجازت نہیں دے گا۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند