تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
خلیج متفق، سعودی آرامکو پر حملوں میں ایران کا ہاتھ ہے: مائیک پومپیو
امریکا سعودی عرب میں تیل کی تنصیبات پر ڈرون حملوں سے پیدا ہونے والے بحران کا پُرامن حل جبکہ ایران جنگ چاہتا ہے
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

پیر 21 صفر 1441هـ - 21 اکتوبر 2019م
آخری اشاعت: جمعرات 19 محرم 1441هـ - 19 ستمبر 2019م KSA 19:22 - GMT 16:22
خلیج متفق، سعودی آرامکو پر حملوں میں ایران کا ہاتھ ہے: مائیک پومپیو
امریکا سعودی عرب میں تیل کی تنصیبات پر ڈرون حملوں سے پیدا ہونے والے بحران کا پُرامن حل جبکہ ایران جنگ چاہتا ہے
امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو
ابو ظبی ۔ ایجنسیاں

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا ہے کہ ان کا ملک سعودی عرب میں تیل کی تنصیبات پر ڈرون حملوں سے پیدا ہونے والے بحران کا پُرامن حل چاہتا ہے جبکہ ایران جنگ کی دھمکیاں دے رہا ہے۔

انھوں نے جمعرات کو ابو ظبی میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ خلیج میں اس بات پر اتفاق پایا جاتا ہے کہ سعودی تنصیبات پر حملوں میں ایران کا ہاتھ کارفرما ہے۔

انھوں نے کہا:’’ ہم (بحران کا) پُرامن حل چاہتے ہیں اور مجھے امید ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران بھی اس معاملے کو اسی طرح دیکھتا ہے۔‘‘

مائیک پومپیو نے وضاحت کی کہ گذشتہ ہفتے کے روز سعودی آرامکو کی تنصیبات پر حملوں کے بعد امریکا ایران کو روک لگانے کے لیے ایک اتحاد تشکیل دینے کی کوشش کررہا ہے لیکن وہ مسئلے کا پُرامن حل چاہتا ہے۔

انھوں نے ابوظبی کے ولی عہد شیخ محمد بن زاید سے ملاقات کے بعد کہا کہ ’’ہم سفارت کاری کے لیے ایک اتحاد تشکیل دینے کی کوشش کررہے ہیں جبکہ ایران کے وزیر خارجہ جواد ظریف ایک مکمل جنگ اور آخری امریکی سے لڑنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔‘‘

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند