تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
ارامکو حملوں کے بعد خلیج میں امریکا کی اضافی کمک کا آپشن زیرِ غور
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

منگل 22 صفر 1441هـ - 22 اکتوبر 2019م
آخری اشاعت: جمعہ 20 محرم 1441هـ - 20 ستمبر 2019م KSA 08:59 - GMT 05:59
ارامکو حملوں کے بعد خلیج میں امریکا کی اضافی کمک کا آپشن زیرِ غور
دبئی – العربیہ ڈاٹ نیٹ

امریکی عسکری ذمے داران کے مطابق وزارت دفاع پینٹاگان کے عہدے داران نے جمعرات کے روز اپنی ملاقاتوں کا سلسلہ جاری رکھا۔ یہ ملاقاتیں جمعے کے روز ڈونلڈ ٹرمپ کی صدارت میں ہونے والے قومی سلامتی کونسل کے اجلاس کی تیاری کے سلسلے میں ہوئیں۔ اجلاس میں ہفتے کے روز سعودی عرب میں تیل کی دو تنصیبات پر حملوں کا جواب دینے کے لیے ممکنہ آپشنز زیر بحث آئیں گے۔

امریکی اخبار "وال اسٹریٹ جرنل" نے عسکری ذمے داران کے حوالے سے بتایا ہے کہ پینٹاگان ارامکو حملوں کے بعد اپنی دفاعی صلاحیتوں کو مضبوط تر بنانے کے لیے خلیج کے علاقے میں فضائی دفاعی نظام کی مزید بیٹریز کے علاوہ نگرانی کے طیارے اور ساز و سامان بھیجنے پر غور کر رہا ہے۔

اسی طرح وہ دیگر کئی آپشنز میں مستقبل میں کم از کم ایک طیارہ بردار جہاز باقی رہنے پر بھی غور کر رہا ہے۔

یاد رہے کہ امریکی وزیر دفاع کے معاون جوناتھن ہوفمین نے جمعرات کے روز واشنگٹن میں ایک پریس کانفرنس میں اعلان کیا تھا کہ ارامکو تنصیبات پر حملوں کا بلا واسطہ یا بالواسطہ ذمے دار ایران ہی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ جوابی کارروائی کے تمام آپشنز صدر ٹرمپ کے سامنے پیش کیے جائیں گے اور حتمی فیصلہ وہ ہی کریں گے۔ ہوفمین کے مطابق ارامکو تنصیبات پر حملہ ایک بین الاقوامی معاملہ ہے اور ہم سعودی عرب کی تحقیقات کے نتائج کے منتظر ہیں۔

اس سے قبل سعودی وزارت دفاع نے بدھ کے روز اعلان کیا تھا کہ مملکت میں ارامکو تنصیبات پر ہونے والے حملے شمال کی جانب سے کیے گئے اور انہیں ایران کی سپورٹ حاصل تھی۔

سعودی وزارت نے اُن میزائلوں کے ٹکڑے اور باقیات کو میڈیا کے سامنے پیش کیا جن کے ذریعے البقیق اور ہجرہ خریص کے علاقوں میں ارامکو کے دو پلانٹس کو نشانہ بنایا گیا تھا۔ وزارت کا یہ بھی کہنا تھا کہ "ہمارے پاس اس بات کے ثبوت ہیں کہ ایران خطے میں اپنے ایجنٹوں کے ذریعے تخریب کاری کی کارروائیوں میں ملوث ہے"۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند